• ☚ مریضو ں کی سہولیات کیلئے بی ایچ یوز چوبیس گھنٹے کھلے رکھنے کا فیصلہ
  • ☚ میونوال :بینک کی اقساط نہ دینے پر رکشہ ڈرائیور کو گولیاں مار دی گئیں
  • ☚ پولیس کو ایمرجنسی کال پر گمراہ کرنیوالے کی سختی ‘گرفتاری کیلئے چھاپے
  • ☚ واپڈا نے بجلی چوروں کا گھیرا تنگ کر دیا‘ گجرات اور کنجاہ میں آپریشن
  • ☚ گجرات پولیس کا اسلحہ برداروں اور منشیات فروشوں کیخلاف آپریشن
  • ☚ طلبا گروپوں میں تصادم اور فائرنگ ‘ تعلیمی اداروں میں سرچ آپریشن کا فیصلہ
  • ☚ ٹریفک حادثات میں نوجوان جاں بحق‘ خاتون سمیت نصف درجن افراد زخمی
  • ☚ حکومت کی نئی لیبر پالیسی کے مثبت اثرات مرتب ہونگے:دلدار جٹ
  • ☚ ٹریفک حادثے میں جاں بحق ہونیوالا نوجوان سفیان سپردخاک
  • ☚ ریسکیو 1122کے زیر اہتمام نجی سکول میں تربیتی ورکشاپ کا انعقاد
  • ☚ عمران خان کے 6 غیر ملکی دوروں کے اخراجات سامنے آگئے
  • ☚ نیب نے آصف زرداری اور بلاول بھٹو کو 13 دسمبر کو طلب کرلیا
  • ☚ کراچی: ایم کیو ایم پاکستان کی محفل میلاد میں دھماکا، 6 زخمی
  • ☚ صدر مملکت کا ٹیلی فون لگوانے کیلئے رشوت کا انکشاف
  • ☚ میڈیا 6 ماہ صرف ترقی دکھائے، آگے وقت بہت اچھا یا بہت خراب، آج پرانی فوج نہیں، ایک ایک اینٹ لگاکر پاکستان دوبارہ بنارہے ہیں، فوجی ترجمان
  • ☚ ’’مریم اورنگزیب جھوٹی ہیں، کسی سے مخلص نہیں‘‘
  • ☚ قطری شہزادے کو نئے پاکستان میں بھی ’تلور‘ کے شکار کی اجازت
  • ☚ ہوسکتا ہے کچھ وزراء کو ہٹا دیں، وزیراعظم
  • ☚ شاہ محمود قریشی کا سشما سوراج کو کرارا جواب
  • ☚ لاڈلے کوکھیلنے کیلئے ملک دیدیاگیا، یوٹرن لینا اچھا ہے تو بجلی، گیس کی بڑھائی ہوئی قیمتوں اور مہنگائی پرلیں، بلاول بھٹو
  • ☚ معاشی و سیاسی دبائو،فرانس کی طرح برسلز میں بھی احتجاجی مظاہرے،نوجوانوں کی بھر پور شرکت
  • ☚ دہشت گرد کیمیائی حملوں کا منصوبہ بنا رہے ہیں، برطانوی حکام کا انتباہ
  • ☚ بریگزٹ ڈیل مسترد کی تو غیر معمولی خطرناک صورتحال کا سامنا ہوسکتا ہے،تھریسامے
  • ☚ فواد چوہدری کی برطانوی اور ہالی ووڈ اداکاروں کو پاکستان آنے کی دعوت
  • ☚ ناروے پلس تھریسا مے پلان کا معقول متبادل آپشن ہو سکتا ہے، امبر رڈ
  • ☚ فواد چوہدری لندن میں پکنک پر ہیں،وزیر اعظم نے وزارت اطلاعات میں آنے کی پیشکش کی ہے،شیخ رشید
  • ☚ مسئلہ کشمیر حل کئے بغیر امن کا خواب بلا جواز ہے،بیرسٹر عبدالمجید ترمبو
  • ☚ منی لانڈرنگ سے نمٹنے کی برطانوی کوشش قابل تعریف ہیں، ایف اے ٹی ایف
  • ☚ ایم پیز کو بیک سٹاپ پر اختیار دینے کی تجویز پر تھریسامے کو تنقید کا سامنا
  • ☚ پاکستان نے فائنل اپیل رد کرکے18 فلاحی تنظیموں کوملک سے نکال دیا
  • ☚ ’دیپیکا اور رنویر‘ شادی کی تقاریب کا احوال
  • ☚ انسٹا گرام 2018 میں زیادہ فالو کی جانے والی سیلیبرٹیز
  • ☚ ’مائیکل جیکسن‘ دنیا کا مشہور ترین پاپ اسٹار
  • ☚ میکسیکو کی حسینہ مس ورلڈ منتخ
  • ☚ فواد اورماہرہ کی ’دی لیجنڈ آف مولا جٹ ‘ کب ریلیز ہوگی؟ تاریخ کا اعلان ہوگی
  • ☚ ایمر جنگ ایشیا کپ ، پاکستان کو شکست
  • ☚ لاہور قلندرز نے محمد حفیظ کو کپتان مقرر کردیا
  • ☚ بیرون ملک سے افسران کو لانے کا مقصد بورڈ کو پروفیشنل خطوط پر چلانا ہے،احسان مانی
  • ☚ قومی ٹیم کو نئے اسٹارز پی ایس ایل سے نہیں ملے، باسط عل
  • ☚ صرف میری وجہ سےٹیم ہار رہی ہوگی تو قیادت چھوڑ دوں گا، سرفراز احمد
  • آج کا اخبار

    لوٹن کونسل میں بن سروسز کا سابقہ شیڈول بحال کرنے کا مطالبہ مسترد، پاکستانیوں سمیت ایشیائی کمیونٹی کو مایوسی

    Published: 10-11-2018

    Cinque Terre

    لوٹن : لوٹن بن پٹیشن پر کونسل اجلاس کے دوران لوٹن بن سروسز پہلے کی طرح برقرار رکھنے کا مطالبہ لیبر کونسل نے مسترد کردیا۔ جس پر پاکستانی کمیونٹی سمیت ایشیائی کمیونٹی نے شدید مایوسی کا اظہار کیا ہے۔ لوٹن کمیونٹی کی بن پٹیشن کو لوٹن کونسل چیمبر ٹائون ہال میں 6نومبر شام6بجے فل کونسل اجلاس میں ڈسکس کیا گیا اور بن مہم کے محرک راجہ اکبر داد خان کو ساڑھے سات منٹ بن سروسز پہلے کی طرح برقرار رکھنے کا کمیونٹی مطالبہ پیش کرنے کا موقع دیا گیا۔ انہوں نے بن شیڈول میں نظر ثانی کے لئے مدلل دلائل پیش کئے اور واضح کیا کہ ہفتے کے بجائے دو ہفتے بعد بن کولیکشنز نہایت متاثر کرنے والا فیصلہ ہے لیکن لیبر ہولڈ کونسل نے کمیونٹی کو شدید متاثر کرنے والے ایشو جس کو جمہوری طور پر کمیونٹی نے ایک یاد داشت کی صورت میں پیش کیا تھا کو مسترد کردیا اس مسئلہ پر باضابطہ ووٹنگ کی گئی۔ فکر انگیز طور پر بن مسئلہ پر منگل کی شب اجلاس میں موجود لیبر کونسلرز نے بن شیڈول میں تبدیلی کے فیصلہ کو برقرار رکھنے کی حمایت اور پہلے کی طرح سروسز فراہم کرنے کے خلاف ووٹ دیئے۔ حالانکہ کمیونٹی کی اکثریت لیبر پارٹی سے وابستہ ہے۔ البتہ لوٹن کے پہلے پاکستانی میئر کا اعزاز حاصل کرنے والے سینئر کونسلر چوہدری محمد اشرف نے کمیونٹی پٹیشن کے حق میں ووٹدیا۔ انہوں نے نمائندہ سے بات چیت میں واضح کیا کہ وہ اس عرصہ میں لوٹن جہاں بھی گئے ہر طرف کالے بن پڑے دیکھے۔ انہوں نے کہا کہ لوٹن کونسل کے پاس لوٹن ائر پورٹ کی مد میں خطیر رقم موجود ہے جو کہ اس ضمن میں خرچ کی جاسکتی تھی انہوں نے دو ہزار کے دھائی میں لوٹن کے ایک سروے کا حوالہ بھی دیا کہ اس وقت شہریوں نے شہر کو صاف ستھرا رکھنے کو اپنی پہلی ترجیح قرار دیا تھا اور جب وہ فنانس کے پورٹ فولیو ہولڈر تھے انہوں نے اس امر کو یقینی بنایا تھا کہ قصبہ کی صفائی ستھرائی سے متعلق سروسز مکمل طور پر جاری رہیں۔ مگر اب شیڈول میں تبدیلی کر دی گئی ہے جس سے بہت لوگ متاثر ہورہے ہیں۔ لوٹن کونسل میں لب ڈیم کے تمام کونسلرز اور ٹوری کے ایک کونسلرز کے سوا سب نے لوٹن کمیونٹی کی بن ایشو پر پٹیشن کے حق میں ووٹ دیئے مگر چونکہ ٹائون ہال میں واضح اکثریت لیبر پارٹی کے کونسلرز کی ہے جن کی قابل ذکر تعداد پاکستان کشمیری اوریجن کونسلرز پر مشتمل ہے لیکن سینکڑوں افراد کی پٹیشن کے باعث کونسل رولز کے تحت ووٹ کا حق ملنے کے باوجود لیبر کونسلرز نے پہلے کی طرح بن سروسز کوجاری رکھنے کے کمیونٹی مطالبہ کے خلاف ووٹ ڈالے۔ متعلقہ پورٹ فولیو ہولڈر کونسلر ٹام شو کا موقف تھا کہ وہ اس طرح کے منصوبے سے ری سائیکلنگ کے عمل میں اضافہ کرنا چاہتے ہیں لیبر ایگزیکٹو کونسلر راجہ محمد اسلم خان کا کہنا تھا کہ ٹوری اور لب ڈیم کی مرکزی مخلوط حکومت نے کٹوتیوں کا جو عمل شروع کیا تھا اس سے لوٹن کونسل بھی متاثر ہوئی اور آج یہ اسی کا نتیجہ ہے کہ ہم یہ فیصلہ کرنے پر مجبور ہیں۔ ایگزیکٹو کونسلر راجہ وحید اکبر نے لوٹن کونسل کی طرح کی متعدد دیگر کونسلوں کی مثالیں دیں جہاں پر پہلے سے ہی بن شیڈول میں تبدیلی کی جاچکی ہے۔ جبکہ لب ڈیم کے کونسلر ڈیوڈ فرینک اور کونسلر پیٹر چیپ مین نے لوٹن کمیونٹی کی بن ایشو پر پٹیشن کے حق میں بھرپور دلائل دیئے اور یہ واضح کرنے کی کوشش کی کہ ہر کونسل اپنے حالات کے مطابق فیصلے کرتی ہے اور جو ہم لوٹن کے کونسلرز ہیں ہمیں یہاں کے حالات اور ضروریات کے مطابق وسیع مشورہ جات سے ایسے اہم فیصلے کرنے چاہئیں۔ اس کارروائی کو دیکھنے کے گیلری میں کمیونٹی کی چیدہ شخصیات موجود تھیں ان کا حوالہ دیتے ہوئے لب ڈیم کونسلر پیٹر چیپ مین نے کہا کہ آخر کوئی مسئلہ ہے کہ جس باعث لوگ گیلری میں آئے ہوئے ہیں۔ اس موقع پر خطیب مرکزی جامع مسجد غوثیہ لوٹن حافظ اعجاز احمد، سابق میئر لوٹن چوہدری مسعود اختر، چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی کشمیر فورم یوکے چوہدری محمد بشیر، اسلامک کلچرل سوسائٹی کے حاجی چوہدری محمد قربان اور حاجی چوہدری محمد نثار، پی پی ایکشن کمیٹی کے پیر سید اعجاز محی الدین قادری، مسلم کانفرنس کے شبیر ملک، ممتاز بٹ، سماجی شخصیت چوہدری منشی اکبر سمیت متعدد عمائدین موجود تھے؎۔ اجلاس کو لیڈی میئر لوٹن کونسلر نسیم ایوب نے کنڈکٹ کیا، جبکہ آغاز علامہ قاضی عبدل عزیز چشتی کی تلاوت سے کیا گیا یہاں خیال رہے کہ لوٹن کونسل نے 2اکتوبر سے دو ہفتے بعد بن کولیکشنز کرنے کا اقدام اٹھایا ہے جس پر بالخصوص ٹائون کے پاکستانی کشمیری کمیونٹی اور بنگلہ دیشی باشندوں کی قابل ذکر تعداد جن کے خاندان کے سائز بڑے ہیں نے عدم اعتماد کا اظہار کیا تھا اورایک پٹیشن لانچ کی۔ نئی صورت حال پر پٹیشن کے محرک راجہ اکبر داد خان نے تبصرہ کرتے ہوئے جنگ کو بتایا ہے کہ ویک اینڈ پر کمیونٹی عمائدین کا اجلاس طلب کرکے آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ محسوس یہی ہوتا ہے کہ کونسل کے ذمہ دار ہماری کمیونٹی کے طرز معاشرت کو تبدیل کرنا چاہتے ہیں۔ سابق ڈپٹی لیڈر اور کونسلر حلقہ ڈالو چوہدری محمد اشرف نے کہا کہ وہ اس مسئلے پر کمیونٹی کے شانہ بشانہ کھڑے ہو کر جدوجہد کریں گے۔ سابق میئر لوٹن چوہدری مسعود اختر نے کہا کہ ووٹنگ پر مایوسی ہوئی ہے۔ خطیب مرکزی جامع مسجد غوثیہ لوٹن حافظ اعجاز احمد نے بھی مایوسی کا اظہار کیا ہے، اسلامک کلچرل سوسائٹی لوٹن کے حاجی چوہدری محمد قربان نے کہا لیبر پارٹی کے کمیونٹی کونسلرز پر بہت مایوسی ہوئی۔ سابق چیئرمین لیبر پارٹی لوٹن نارتھ اعظم خان راجہ نے کہا کہ لوٹن کونسل میں غیر موثر کمیونٹی لیبر کونسلرز نے بن شیڈول میں تبدیلی کا فیصلہ کرکے کمیونٹی کو سخت مشکلات میں ڈال دیا ہے۔ جنرل سیکرٹری سنی کونسل لوٹن راجہ فیصل کیانی نے ایک اوپن ڈبیٹ اور ایک ایسی کمپین کی ضرورت پر زور دیا جس سے پاکستانی کشمیری کمیونٹی اور مقامی عوامی مفادات کے خلاف فیصلوں سے کمیونٹی کو بھرپور طریقے سے آگاہ کیا جائے۔ متعدد دیگر عمائدین نے بھی کہا ہے کہ کمیونٹی آئندہ الیکشن میں سوچ سمجھ کر ایسے کونسلرز کا انتخاب کرے جو ٹائون ہال میں کمیونٹی معاملات پر صیح معنوں میں مثبت کردار ادا کرسکنے کی اہلیت سے بہرہ ور ہوں۔