• ☚ 3افراد سے اسلحہ برآمد ،5بوتل شراب پکڑی گئی
  • ☚ چوہدری وجاہت حسین ‘چوہدری حسین الٰہی حلقہ پر بھر پور توجہ دے رہے ہیں ‘نعمان مظہر
  • ☚ چوہدری برادران نے اجنالہ خاندان کی عزت افزائی کی ‘چوہدری مظہر اقبال
  • ☚ سانحہ نیوزی لینڈ‘ ثابت ہوا دہشتگردوں کاکوئی مذہب نہیں ہوتا:زین مظہر
  • ☚ ڈائریکٹر صوفی بلڈرز عمرہ کی سعادت حاصل کرنے کیلئے سعودی عرب روانہ
  • ☚ ایجوکیٹرز بارہ دری کیمپس میں میرٹ پر داخلے کیے جا رہے ہیں
  • ☚ چیمبر کی اینول شپ مہم‘مہر طارق سعید نے لالہ موسیٰ میں ڈیسک لگایا
  • ☚ نیوزی لینڈ میں شہادتیں‘مسلمانوں کیخلاف سازش تیار کی گئی ‘ نجیب اشرف چیمہ
  • ☚ سانحہ نیوزی لینڈ‘امت مسلمہ ایک پلیٹ فارم پرجمع ہوجائے:احمد ثناءاللہ
  • ☚ عید گاہ لڑکی اغوائ‘دس افراد نے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا
  • ☚ غداری کیس، عدالت کا ویڈیو لنک کے ذریعے مشرف کا بیان ریکارڈ کرنے پر غور
  • ☚ امن فاتح ، پاکستان زندہ باد، کراچی میں PSL کی خوبصورت اختتامی تقریب، صدر، آرمی چیف، وزیراعلیٰ، گورنر، وزراء سمیت نیشنل اسٹیڈیم میں اہم شخصیا
  • ☚ میلی آنکھ نکالنے کی صلاحیت رکھتے ہیں، یورپ میں اسلام فوبیا دکھائی دے رہا ہے، وزیرخارجہ
  • ☚ بنگلہ دیشی کرکٹ ٹیم بال بال بچ گئی، مسلمانوں کو دہشت گرد کہنے والوں کی دہشت گردی، نیوزی لینڈ، مساجد میں نمازیوں پر فائرنگ، 49 شہید
  • ☚ وزیراعلیٰ، اسپیکر، ڈپٹی اسپیکر،وزررأ اور اراکین کی تنخواہوں،مراعات میں کئی گنا اضافہ، بل منٹوں میں منظور
  • ☚ پاک فضائیہ کا طویل فاصلے تک مارکرنے والے مقامی میزائل کا کامیاب تجربہ، جے ایف 17 تھنڈر رات میں بھی ہدف کو مار سکے گا
  • ☚ سندھ طاس معاہدے پر مذاکرات ملتوی، بھارت پانی نہیں روک سکتا، پاکستانی واٹر کمشنر
  • ☚ کشیدگی میں مزید کمی، پاکستانی اور بھارتی ہائی کمشنرز نے دوبارہ اپنی اپنی ذمہ داریاں سنبھال لیں
  • ☚ وزیراعظم نے اتنے جھوٹ بولے جتنے تمام وزرائے اعظم نے مل کر بھی نہ بولے ہوں گے، راہول
  • ☚ طاقت استعمال کرنے کا حق صرف ریاست کو ہے، آرمی چیف
  • ☚ سیکس آفنسز میں لارڈ احمد اور دو بھائیوں کی عدالت میں پیشی
  • ☚ پاکستان ہائی کمیشن لندن میں نیوزی لینڈ کے شہیدوں کیلئے دعائیہ اجتماع
  • ☚ بریگزٹ توسیع کیلئے برطانیہ واضح اور جامع تجاویز پیش کرے، فرانس اور جرمنی کا انتباہ
  • ☚ بریگزٹ پر باعزت کمپرومائز کیا جائے، ارکان پارلیمنٹ سے تھریسا مے کی اپیل
  • ☚ مقبوضہ کشمیر میں مظالم، لندن میں بھارتی ہائی کمیشن کے سامنے احتجاجی مظاہرہ، کمیونٹی کی بھرپور شرکت
  • ☚ جیرمی کوربن نے یورپی یونین چھوڑنے کی حمایت کا اشارہ دیدیا
  • ☚ سوشل میڈیا فرمس اپنے پلیٹ فارمز صاف یا قانون کا سامنا کریں،ساجدجاوید
  • ☚ بریگزٹ : سینئر کنزرویٹیو ایم پی نک بولز کا سبکدوش کئے جانے سے قبل استعفیٰ
  • ☚ یورپی سفارتکاروں نے بریگزٹ موخر کرنے کیلئے شرائط اور رولز طے کرلئے
  • ☚ برمنگھم میں پولیس آپریشن کے دوران 50 سالہ شخص ہلاک
  • ☚ لیجنڈ اداکار محمد علی کو مداحوں سے بچھڑے 13 برس بیت گئے
  • ☚ وینا ملک کا بھارت میں کبھی بھی کام نہ کرنے کا اعلان
  • ☚ کامیڈی فلم ’رانگ نمبر ٹو‘ کا پہلا پوسٹر جاری
  • ☚ پاکستانی فنکارمہوش حیات کے حق میں نعرے بلند کرنے لگے
  • ☚ اداکارہ زارا شیخ کی طویل عرصے بعد فلموں میں واپسی
  • ☚ پاکستان آسٹریلیا سیریز ٹرافی کی رونمائی آج ہوگی
  • ☚ ٹاپ پاکستانی کرکٹرز قومی ون ڈے کپ میں شرکت نہیں کریں گے
  • ☚ ورلڈکپ کرکٹ، پاک بھارت مقابلے کے ٹکٹس کیلئے 4 لاکھ درخواستیں
  • ☚ جونٹی رہوڈز ہیوی موٹر سائیکل پر سندھ گورنر ہائوس پہنچے
  • ☚ ڈو مور کی ضرورت نہیں، پاکستان سپرلیگ انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی کیلئے مثبت قدم، آئی سی سی
  • آج کا اخبار

    ۭلندن میں مودی کے حامیوں نے سکھوں اور کشمیریوں پر ہلہ بول دیا، لاتوں گھونسوں سے 3 افراد زخمی

    Published: 11-03-2019

    Cinque Terre

    لندن / فرینکفرٹ : بھارتی حکومت کی جانب سے سکھوں اور کشمیری عوام پر مظالم کے خلاف احتجاج کرنے والوں پر گزشتہ روز مودی کے حامیوں نے حملہ کر دیا اور مظاہرین پر گھونسوں اور لاتوں کی بارش کر دی، جس کے نتیجے میں ایک صحافی سمیت 3افراد زخمی ہوگئے، بھارتی جیلوں میں قید سکھ قیدیوں کی رہائی کیلئے مظاہرے کا اہتمام سکھوں کی مختلف تنظیموں نے مشترکہ طور پر کیا تھا جبکہ کشمیری گروپوں نے سکھوں کی حمایت میں مظاہرے میں شرکت کی۔ کشمیری اپنے ہاتھوں میں کشمیر کا پرچم اٹھائے ہوئے تھے، سکھ مظاہرین بینر اٹھائے ہوئے تھے، جن پر خالصتان کے قیام اور فیس بک پر میسیج پوسٹ کرنے پر گرفتار کئے گئے اور جعلی اور جھوٹے الزامات پر قید کئے گئے درجنوں سکھوں کو فوری طور پر رہا کرنے کے مطالبات درج تھے، مظاہرین کا کہنا تھا کہ بھارتی حکومت نے جن لوگوں کو حراست میں لیا ہے، ان میں متعدد برطانوی شہری شامل ہیں، جو اپنے رشتہ داروں سے ملنے بھارت گئے ہوئے تھے۔ مظاہرین نے اس حوالے سے

    رنجیت سنگھ، سرجیت سنگھ اور اروندر سنگھ کے نام خاص طورپر لئے، جنھیں فیس بک پر میسیج پوسٹ کرنے پر جیل میں ڈال دیاگیا ہے۔ مظاہرہ پرامن طورپر جاری تھا کہ اچانک مودی کا حامی ایک گروپ اچانک نمودار ہوا اور پرامن مظاہرین کے خلاف اشتعال انگیز نعرے لگانا شروع کردیئے، ان لوگوں نے ایسے پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے، جن پر سکھ مذہب کے خلاف توہین آمیز نعرے درج تھے، جس کے بعد دونوں گروپوں میں ہاتھا پائی شروع ہوگئی اور ہولبرن اور لندن سکول آف اکنامکس کا پورا علاقہ اس کی لپیٹ میں آگیا اور کچھ دیر کیلئے اس علاقے میں آمدورفت رک گئی۔ مظاہرین کو روکنے کیلئے فوری طورپر درجنوں پولیس وینز موقع پر پہنچ گئیں اور انھوں نے دونوں گروپوں کو الگ کرنے کی کوشش کی، اس دوران مودی کے حامیوں نے خالصتانی اورکشمیری مظاہرین پر بوتلیں پھینکیں اور دونوں جانب کے لوگوں نے ایک دوسرے پر گھونسوں اورلاتوں کی بارش کردی۔ سکھ مظاہرین نے بھارتی ہائی کمیشن کے سامنے بھارتی پرچم زمین پر گرا دیا، اس دوران ایک نجی چینل کیلئے کام کرنے والے پاکستانی رپورٹر فرید قریشی بھی زخمی ہوگئے، ان کی ناک اور آنکھ پر چوٹ لگی۔ انھوں نے بتایا کہ وہ اپنے فرائض انجام دے رہے تھے، جب انھیں حملے کا نشانہ بنایا گیا۔ پولیس کی ایمبولنس سے زخمیوں کو ابتدائی طبی امداد فراہم کی گئی۔ فرید قریشی نے کہا کہ اگرچہ میری آنکھ پر لگنے والی چوٹ معمولی نظر آرہی ہے لیکن یہ خطرناک بھی ثابت ہوسکتی ہے۔ انھوں نے کہا کہ میں بہت زیادہ درد محسوس کر رہا ہوں۔ انھوں نے بتایا کہ ہاتھا پائی میں شریک دو افراد کو پولیس نے گرفتار کرلیا۔ انھوں نے ان دونوں کے ہاتھوں میں ہتھکڑی دیکھی ہے۔ اس تصادم کے دوران زخمی ہونے والے ایک شخص کے سر سے خون بہتا ہوا نظر آرہا تھا۔ ورلڈ سکھ پارلیمنٹ کے جوگاسنگھ نے بین الاقوامی میڈیا سے باتیں کرتے ہوئے جنگ روکنے کیلئے فوری اقدامات کا مطالبہ کیا اور کہا کہ جنگ کی صورت میں سکھوں کا وطن اور سکھ آبادی تباہ ہوجائے گی۔ خالصتان کونسل کے امریک سنگھ سہوتا نے بھارت کے زیر قبضہ علاقوں کے سکھوں اور کشمیریوں پر زور دیا کہ وہ جنگ روکنے کیلئے کوششیں کریں اور سکھ فوجیوں سے کہا کہ مکمل جنگ چھڑجانے کی صورت میں وہ پنجاب واپس چلے جائیں اور اپنے لوگوں کو تحفظ فراہم کرنے کی کوشش کریں۔ سکھ فار جسٹس کے ڈوپنڈر جیت سنگھ اور پرماجیت سنگھ پما نے مطالبہ کیا کہ بھارت کے زیر قبضہ پنجاب میں ریفرنڈم اور کشمیر میں رائے شماری کرائی جائے تاکہ جمہوری طورپر ان تنازعات کا مستقل حل نکل سکے۔ سکھ ریلیف کے بلبیر سنگھ بینس نے بھارت سے تمام سیاسی سکھ قیدیوں کو فوری طورپر رہا کرنے اور متنازع علاقے میں حق خود اختیاری کا دیرینہ وعدہ پورا کرنے کا مطالبہ کیا۔ کشمیری رہنمائوں نے اقوام متحدہ کے انسانی حقوق سے متعلق کمشنر کی رپورٹ پر فوری کاررروائی کرنے اور بھارتی حکومت کو کشمیر میں مظالم بند کرنے اور متنازع علاقے میں حق خود ارادی کا دیرینہ وعدہ پورا کرنے کا مطالبہ کیا۔ اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر آرگنائزیشن کے نعیم عباسی نے کہا کہ بین الاقوامی میڈیا کی جانب سے بھارت کے فضائی حملوں کے بارے میں جھوٹے دعوئوں کی پول کھول دیئے جانے سے مودی کے پروپیگنڈے کی کوششوں کو بری طرح جھٹکا لگا ہے۔ انھوں نے کہا کہ لندن میں آج ہونے والے ایونٹ کے بعد اب ہندوتوا کو اگلے ہفتوں اور مہینوں کے دوران مزید چیلنجوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔ صباح نیوز کے مطابق لندن میں بھارتی ہائی کمیشن کے باہر سکھوں اور کشمیریوں کے احتجاج پر بھارتی انتہا پسندوں نے دھاوا بول دیا اور مظاہرین سے جھنڈے اور پلے کارڈ چھیننے کی کوشش کی۔ جرمنی میں بھی مسلمانوں اور سکھوں نے مقبوضہ وادی میں کشمیریوں پر مظالم کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔ بھارتی جارحیت کے خلاف جرمنی کے شہر فرینکفرٹ میں انٹرنیشنل خالصہ فیڈریشن جرمنی اور ای یو پاک فرینڈشپ فیڈریشن یورپ کے زیراہتمام احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ مظاہرے میں سکھ برادری اور یورپ میں بسنے والے تمام مکاتب فکر کے افراد نے بھارتی جارحیت کے خلاف شرکت کی۔