• ☚ وزیراعلی پنجاب کی زیرصدارت صوبائی کابینہ کا اجلاس
  • ☚ پاک ‘ سعودی عرب دوستی لا زوال ہے:صادق سنجرانی
  • ☚ راولاکوٹ کو سیاحتی ترقی کا مرکز بنائیں گے ‘بین الاقوامی سیاحت کے لیے یہ علاقہ موزوں ترین ہےراجہ فاروق حیدر
  • ☚ کنجاہ:شراب کی چالو بھٹی پر چھاپہ‘بدنام زمانہ منشیات فروش گرفتار
  • ☚ ضعیف العمر خاتون پر بھتیجے کا بدترین تشدد
  • ☚ میر شکیل احمد کے ایصال ثواب کیلئے ختم قل‘ ممتاز شخصیا ت کی شرکت
  • ☚ فتح پور میں شیشہ فلیورز برآمد ہونے پر صابر حسین کیخلا ف مقدمہ درج
  • ☚ کنجاہ پولیس نے ناجائز اسلحہ بردار گرفتار کر لیا ‘ پستول برآمد
  • ☚ ڈنگہ چوک کنجاہ سے منشیات فروش محمد احسن گرفتار‘ مقدمہ در ج
  • ☚ ڈپٹی کمشنر گجرات آج ایگریکلچرایڈوائزری کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرینگے
  • ☚ سی ایس ایس امتحان رولز میں تبدیلی کا معاملہ : نظرثانی پٹیشن بحال
  • ☚ چاہے وقت لگے ملک لوٹنے والوں کو نشان عبرت بنائوں گا، عمران خان
  • ☚ سری لنکا میں گرجا گھروں اور ہوٹل دھماکوں میں 207 افراد ہلاک، کرفیو نافذ
  • ☚ ایمنسٹی یا کریک ڈائون، کابینہ کے دوسرے اجلاس میں بھی اسکیم پر اختلافات برقرار، متعدد ارکان FBR سے ناراض، ذائع
  • ☚ ہیموفیلیا کے عالمی دن کے موقع پرخصوصی تقریب کا انعقاد
  • ☚ فیض آباد دھرنا کیس، فیصلے سے افواج پاکستان کے حوصلے پر منفی اثرات مرتب ہوئے، وزارت دفاع
  • ☚ گجرات میں 5 افراد سے منشیات اور اسلحہ برآمد کر کے مقدمات درج کر لیے گئے
  • ☚ عمران خان چند برسوں میں اثاثے کئی گنا ہوجانےکا حساب دیں، سلیمان شہباز
  • ☚ IMF سے معاہدہ اسی ماہ،معاملات طے پاگئے، 6 سے 8 ارب ڈالر قرض ملے گا، کچھ چیزیں مہنگی ہوں گی،عام آدمی متاثر نہیں ہوگا، وزیرخزانہ
  • ☚ پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان معاملات طے ‘ اربوں ڈالر کا پیکج ملے گا:کڑے معاشی بحران کا سامنا ہے: وزیر خزانہ
  • ☚ انگلینڈ کے ایک تہائی شہریوں کو یقین ہے کہ سکاٹش بنک نوٹ جعلی ہیں
  • ☚ تحریک آزادی کشمیر کو سفارتی محاذ پر اجاگر کرنے کیلئے قومی کونسل بنائی جائے، راجہ نجابت حسین
  • ☚ تبدیلی کیلئے مل کر کوششیں کی جائیں، ہمیں علامہ محمد اقبال ؒکی فکر اپنانا ہوگا، کمیونٹی رہنما
  • ☚ شہباز شریف کا جمعرات کو دوبارہ چیک اپ ہوگا، رائل فری ہسپتال کی تصدیق
  • ☚ برطانیہ مذہبی آزادی کی حمایت کرتا رہے گا، ایسٹر پر تھریسامے کا پیغام
  • ☚ تحفظ ماحولیات مظاہروں کا چھٹا دن، مزید 200 پولیس افسران طلب
  • ☚ سکاٹش کرکٹ ٹیم کے نائب کپتان چل بسے
  • ☚ معدومیت کے خلاف بغاوت،پولیس مظاہرین کے خلاف حرکت میں آگئی
  • ☚ تھریسامے کی ایم پیز کو ہدایت دینے کی بجائے10کے ریس میں شرکت
  • ☚ کوونٹری میں تارکین وطن مخالف بریگزسٹ پارٹی کا اجلاس، مقامی آبادی کا شدید احتجاج
  • ☚ فلم ’’باجی‘‘ سے میرا کی شوبز میں دھماکے دار واپسی
  • ☚ میشا شفیع کا لکس اسٹار ایوارڈ سے اپنا نام نکالنے کا مطالبہ
  • ☚ عاطف اسلم ننھے گلوکاروں کی حوصلہ افزائی کے لئے میدان میں آگئے
  • ☚ گلوکارہ حمیرا ارشد اوراحمد بٹ کے درمیان طلاق
  • ☚ گلوکار علی گل پیر نے والدین کی علیحدگی سے متاثرہ بچوں کے نام ویڈیو جاری کردی
  • ☚ پاکستان کےپاس دنیا کی مہنگی ترین کوچنگ ٹیم
  • ☚ ایشٹن ٹرنر مسلسل پانچ بار صفر پر آؤٹ
  • ☚ پاکستانی کرکٹ ٹیم دورہ انگلینڈ اور ورلڈ کپ کیلئے لندن پہنچ گئی
  • ☚ عامر خان کوعالمی ویلٹر ویٹ فائٹ میں کرافورڈ نے ہرا دیا
  • ☚ ایشین ویٹ لفٹنگ، طلحہ طالب آٹھویں پوزیشن پر
  • آج کا اخبار

    نیوزی لینڈمیں دہشت گردی کے بعد برطانوی پولیس الرٹ، جمعہ اجتماعات میں اظہار مذمت

    Published: 16-03-2019

    Cinque Terre

    لندن ( نیوز ڈیسک) نیوزی لینڈ کی دومساجد میں دہشت گردی کے حملوں کے بعد برطانوی مسلمانوں میں تشویش پیدا ہوگئی ہے اور نماز جمعہ ادا کرنے کے لئے مساجد میں جانے والے مسلمانوں نے خود کو انتہائی چوکنا رکھا جبکہ ان حملوں کے بعد برطانوی پولیس کے مساجد کے اردگرد کو سیکورٹی بڑھا دیا گیا ہے۔ نماز جمعہ کے دوران مساجد کے باہر پولیس کی گاڑیاں بھی تعینات کی گئیں۔ برطانوی مسلمانوں نے جمعہ کے اجتماعات کے دوران ان واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔ علمائے کرام اور خطیبوں نے ان حملوں کو اسلاموفوبیا اور نفرت پر مبنی کارروائی قرار دیا اور مغربی حکومتوں سے مطالبہ کیا کہ وہ دہشت گردوں کے خلاف سخت اقدامات کریں۔ ان کا کہنا تھا کہ اس طرح کی دہشت گردی سے مسلمانوں کو خوفزدہ نہیں کیا جاسکتا کیونکہ مسلمان اپنے دین کی خاطر اپنا سب کچھ قربان کرنا جانتے ہیں۔ جمعے کی نماز میں ورکنگ ڈے ہونے کے باوجود مسلمانوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی اور نیوزی لینڈ کے مسلمانوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کیا۔ اس موقع پر

    بعض مسلمانوں کو اس بات کا دھڑکا بھی لگا رہا کہ کہیں کوئی برٹش انتہاپسند کسی مسجد کی طرف میلی آنکھ سے نہ دیکھ لے۔ تاہم برطانیہ میں لوگوں نے آزادانہ طور پر جمعہ کے اجتماعات میں شرکت کی۔ ادھر برطانوی حکومت نے نیوزی لینڈ حملوں کے بعد پولیس فورسز کو مزید چوکنا کردیا ہے۔ خاص طور پر نماز جمعہ کے وقت پر مساجد کے باہر پولیس کی نفری اور گاڑیاں موجود رہیں۔ اس دوران پولیس کی گاڑیاں ایشیائی علاقوں میں معمول سے زیادہ گشت بھی کرتی رہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اگرچہ برطانیہ میں مساجد یا مسلمانوں کے خلاف کسی بھی حملے کی منصوبے کی کوئی اطلاع نہیں تاہم چونکہ نیوزی لینڈ میں دہشت گردی ہوئی ہے اس لئے مساجد اور مسلمانوں کے تحفظ کے لئے پولیس کو مزید چوکنا کردیا گیا ہے۔ دریں اثنا ملکہ برطانیہ الزبتھ دوم نے اپنے ایک تعزیتی بیان میں نیوزی لینڈ کے عوام سے اظہار یکجہتی کیا ہے۔ گورنر جنرل نیوزی لینڈ ڈیم پاسٹی ریڈی کے نام اپنے پیغام میں انہوں نے کہا کہ کرائسٹ چرچ میں ہونے والے انتہائی افسوسناک واقعے پر وہ انتہائی دکھی ہیں اور اس دکھ کے لمحے میں، میں اور پرنس فلپ متاثرہ خاندانوں سے اظہار افسوس کرتے ہیں۔ دکھ کی اس گھڑی میں میری تمام ہمدردیاں نیوزی لینڈ کے عوام کے ساتھ ہیں۔ ادھربرطانوی وزیراعظم تھریسا مے نے اپنے تعزیتی بیان میں کہا کہ ’’کرائسٹ چرچ میں ہونے والے ہیبت ناک دہشت گردی کے حملے کے بعد میں پورے برطانیہ کی طرف سے نیوزی لینڈ کے عوام سے افسوس کا اظہار کرتی ہوں۔ میری دعائیں اس پر تشدد حملے میں متاثر ہونے والے تمام افراد کے ساتھ ہیں‘‘۔