• ☚ وزیراعلی پنجاب کی زیرصدارت صوبائی کابینہ کا اجلاس
  • ☚ پاک ‘ سعودی عرب دوستی لا زوال ہے:صادق سنجرانی
  • ☚ راولاکوٹ کو سیاحتی ترقی کا مرکز بنائیں گے ‘بین الاقوامی سیاحت کے لیے یہ علاقہ موزوں ترین ہےراجہ فاروق حیدر
  • ☚ کنجاہ:شراب کی چالو بھٹی پر چھاپہ‘بدنام زمانہ منشیات فروش گرفتار
  • ☚ ضعیف العمر خاتون پر بھتیجے کا بدترین تشدد
  • ☚ میر شکیل احمد کے ایصال ثواب کیلئے ختم قل‘ ممتاز شخصیا ت کی شرکت
  • ☚ فتح پور میں شیشہ فلیورز برآمد ہونے پر صابر حسین کیخلا ف مقدمہ درج
  • ☚ کنجاہ پولیس نے ناجائز اسلحہ بردار گرفتار کر لیا ‘ پستول برآمد
  • ☚ ڈنگہ چوک کنجاہ سے منشیات فروش محمد احسن گرفتار‘ مقدمہ در ج
  • ☚ ڈپٹی کمشنر گجرات آج ایگریکلچرایڈوائزری کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرینگے
  • ☚ سی ایس ایس امتحان رولز میں تبدیلی کا معاملہ : نظرثانی پٹیشن بحال
  • ☚ چاہے وقت لگے ملک لوٹنے والوں کو نشان عبرت بنائوں گا، عمران خان
  • ☚ سری لنکا میں گرجا گھروں اور ہوٹل دھماکوں میں 207 افراد ہلاک، کرفیو نافذ
  • ☚ ایمنسٹی یا کریک ڈائون، کابینہ کے دوسرے اجلاس میں بھی اسکیم پر اختلافات برقرار، متعدد ارکان FBR سے ناراض، ذائع
  • ☚ ہیموفیلیا کے عالمی دن کے موقع پرخصوصی تقریب کا انعقاد
  • ☚ فیض آباد دھرنا کیس، فیصلے سے افواج پاکستان کے حوصلے پر منفی اثرات مرتب ہوئے، وزارت دفاع
  • ☚ گجرات میں 5 افراد سے منشیات اور اسلحہ برآمد کر کے مقدمات درج کر لیے گئے
  • ☚ عمران خان چند برسوں میں اثاثے کئی گنا ہوجانےکا حساب دیں، سلیمان شہباز
  • ☚ IMF سے معاہدہ اسی ماہ،معاملات طے پاگئے، 6 سے 8 ارب ڈالر قرض ملے گا، کچھ چیزیں مہنگی ہوں گی،عام آدمی متاثر نہیں ہوگا، وزیرخزانہ
  • ☚ پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان معاملات طے ‘ اربوں ڈالر کا پیکج ملے گا:کڑے معاشی بحران کا سامنا ہے: وزیر خزانہ
  • ☚ انگلینڈ کے ایک تہائی شہریوں کو یقین ہے کہ سکاٹش بنک نوٹ جعلی ہیں
  • ☚ تحریک آزادی کشمیر کو سفارتی محاذ پر اجاگر کرنے کیلئے قومی کونسل بنائی جائے، راجہ نجابت حسین
  • ☚ تبدیلی کیلئے مل کر کوششیں کی جائیں، ہمیں علامہ محمد اقبال ؒکی فکر اپنانا ہوگا، کمیونٹی رہنما
  • ☚ شہباز شریف کا جمعرات کو دوبارہ چیک اپ ہوگا، رائل فری ہسپتال کی تصدیق
  • ☚ برطانیہ مذہبی آزادی کی حمایت کرتا رہے گا، ایسٹر پر تھریسامے کا پیغام
  • ☚ تحفظ ماحولیات مظاہروں کا چھٹا دن، مزید 200 پولیس افسران طلب
  • ☚ سکاٹش کرکٹ ٹیم کے نائب کپتان چل بسے
  • ☚ معدومیت کے خلاف بغاوت،پولیس مظاہرین کے خلاف حرکت میں آگئی
  • ☚ تھریسامے کی ایم پیز کو ہدایت دینے کی بجائے10کے ریس میں شرکت
  • ☚ کوونٹری میں تارکین وطن مخالف بریگزسٹ پارٹی کا اجلاس، مقامی آبادی کا شدید احتجاج
  • ☚ فلم ’’باجی‘‘ سے میرا کی شوبز میں دھماکے دار واپسی
  • ☚ میشا شفیع کا لکس اسٹار ایوارڈ سے اپنا نام نکالنے کا مطالبہ
  • ☚ عاطف اسلم ننھے گلوکاروں کی حوصلہ افزائی کے لئے میدان میں آگئے
  • ☚ گلوکارہ حمیرا ارشد اوراحمد بٹ کے درمیان طلاق
  • ☚ گلوکار علی گل پیر نے والدین کی علیحدگی سے متاثرہ بچوں کے نام ویڈیو جاری کردی
  • ☚ پاکستان کےپاس دنیا کی مہنگی ترین کوچنگ ٹیم
  • ☚ ایشٹن ٹرنر مسلسل پانچ بار صفر پر آؤٹ
  • ☚ پاکستانی کرکٹ ٹیم دورہ انگلینڈ اور ورلڈ کپ کیلئے لندن پہنچ گئی
  • ☚ عامر خان کوعالمی ویلٹر ویٹ فائٹ میں کرافورڈ نے ہرا دیا
  • ☚ ایشین ویٹ لفٹنگ، طلحہ طالب آٹھویں پوزیشن پر
  • آج کا اخبار

    قیمتوں میں اضافہ، حکومت کا دواساز کمپنیوں کیخلاف کریک ڈائون

    Published: 16-04-2019

    Cinque Terre

    اسلام آبادسپریم کورٹ نے 2018کےاپنےچھ صفحات پرمحیط دوآرڈرزمیں کہیں بھی ادویات کی قیمتوں میں اضافہ یاکسی مخصوص اضافے کوطے نہیں کیا۔ لیکن یہ کام ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان(ڈریپ)اوروزارتِ صحت کیلئے چھوڑ دیا گیا تھاکہ وہ اس معاملےمیں فیصلہ کریں۔ یہ بات سپریم کورٹ کے 11 نومبر اور 3 اگست 2018 کے آرڈرز کا قریبی جائزہ لیتےہوئےسامنےآئی۔ سپریم کورٹ میں فارما سوٹیکل انڈسٹری کی نمائندگی کرنےوالےایک اہم وکیل نے بھی اس بات کی توثیق کی۔ انھوں نےدونوں آرڈرزکی تفصیلی وضاحت کی لیکن عدالت جانےکےباعث انھوں نےنام ظاہرنہ کرنےکاکہا۔ اسی دوران قیمتوں میں 15فیصد سے200فیصد تک کااضافہ واپس لینےکی وزیراعظم عمران خان کی 72گھنٹےکی ڈیڈلائن بھی ختم ہوچکی ہےاور اضافہ واپس نہیں لیاگیا۔ ڈریپ اور وزارتِ صحت کی جانب سے اختیار کیاگیاموقف دو عدالتی احکامات کےباعث بےبنیاد ہوجاتا ہےکہ ادوایات کی قیمتوں میں اضافہ سپریم کورٹ کی ہدایات کی روشنی میں کیاگیا۔ وکیل نے کہاکہ ادویات کی قیمتوں میں اضافہ حکومت کی جانب سےکیاگیاہے، سپریم کورٹ نے اپنےدواحکامات کے ذریعے نہیں کیا۔ اس نمائند ےنےکئی بار وزیر صحت عامر محمودکیانی سےان کاموقف جاننےکیلئےفون کیالیکن انھوں نےکال موصول ہی نہیں کی۔ تاہم وزارتِ صحت کے میڈیا کورڈینیٹرساجدحسین شاہ نےوزیرکی جگہ دی نیوزسےتفصیلاً بات کی۔ ایک سوال کےجواب میں انھوں نےاتفاق کیاکہ سپریم کورٹ نے ادوایات کی قیمتوں میں اضافےکاکوئی حکم نہیں دیا نہ ہی کوئی اضافہ تجویز کیا۔ عدالت نے صرف یہ کہاکہ وزارتِ صحت اور ڈریپ فارماسوٹیکل کمپنیوں کے ساتھ مل کرقیمتوں پرنظرثانی کریں۔ انھوں نےکہاکہ حکومت نے9فیصد سے 15 فیصد تک اضافےکا کہالیکن کمپنیوں نےکافی زیادہ اضافہ کردیاجوغیرقانونی ہے۔ انھوں نےکہاکہ قیمتوں میں اضافہ واپس لینےکیلئے گزشتہ کچھ دنوں سےایک کریک ڈائون جاری ہے۔ انھوں نےخبردارکیاکہ مقصدکےحصول تک یہ جاری رہےگا۔ کوآرڈینیٹر نے بتایا کہ حکومت نےفارماسوٹیکل کمپنیوں پرزوردیاہےکہ قیمتوں میں اضافہ واپس لیاجائے، لیکن وہ ہدایات کوماننےمیں ناکام رہےہیں، اسی وجہ سے یہ سخت کارروائی کی گئی۔ اس کا نتیجہ مزید سزاکی صورت میں نکلے گا۔ ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہاکہ ’’حالیہ کریک ڈائون کے ذریعےوزیراعظم کے آرڈرزنافذ کیے جارہے ہیں۔‘‘ انھوں نے کہاکہ اس وقت ایک اعلیٰ سطح کا اجلاس جاری ہے جس میں اس صورتحال پربحث کی گئی اور صارفین کےحقوق کیلئےایک نیافارمولا تیارکیاجارہات ہے تاکہ ان پربوجھ کم کیاجائے۔ کوآرڈینیٹرنےکہاکہ جب حکومت نے مخصوص ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کی اجازت دی ہے تو اسی طرح کچھ 395ادویات کی قیمتوں میں کمی بھی کی تھی، اس پر فارماسوٹیکل کمپنیوں نےعمل نہیں کیا۔ انھوں نے کہاکہ اس طرح کےنفاذ کوہرقیمت پریقینی بنایاجائےگا۔ وکیل نے بتایاکہ کوئی بھی دواساز خودسےقیمت میں اضافہ نہیں کرسکتااور اضافہ صرف ڈریپ ہی کرسکتاہے۔ ’’تاہم چند کیسز میں دواساز کمپنیوں نے قیمتیں بڑھادیں، جو غیر قانونی تھا، اور حکومت پر اس کا الزام دیاگیا۔ یہ حقیقت ہے کہ بہت سی کمپنیوں نے غیرمثالی طورپر قیمتوں میں اضافہ کیا۔‘‘ اٹارنی نےبتایاکہ موجودہ صورتحال کافی دلچسپ ہے، دواساز کمپنیوں نے قیمتوں میں اضافہ کیا اور انھیں بنیادی قیمتوں میں سیٹ کردیااور ڈریپ سےاضافے پرڈریپ سے منظوری لے لی۔ درحقیقت دواسازوں کی جانب سے اضافہ غیرقانونی تھا یہ ان کی جانب سے کیاگیا نہ کہ ڈریپ نے کیا۔ انھوں نے کہاکہ 2013ادوایات کی قیمتوں میں 13فیصد اضافے کی منظوری دی گئی تھی جو اگلے ہی دن حکومت نے ختم کردی۔ تاہم فارماسوٹیکل کمپنیوں نے عدالت کارخ کیا اور سٹے آرڈر لے لیااور اضافے کو برقرار رکھا۔