• ☚ معروف نعت خواں قاری غلام سرور نقشبندی کا صاحبزادہ ماکو کی پہاڑیوں میں سیکورٹی گارڈز کی فائرنگ سے جاں بحق
  • ☚ ون ڈش کی خلاف وزری پر جلالپورجٹاں کے میرج ہال میں چھاپے ،رنگ برنگے کھانے قبضہ کرلئے گئے
  • ☚ پالتوکتے کوچھریاں مارکرقتل کرنیکامعاملہ،واقعہ کاسخٹ نوٹس لے لیاگیا
  • ☚ ناروالی سنٹر میں پانچویں جماعت کا امتحان پر امن طریقہ سے ہو رہا ہے
  • ☚ ککرالی ہلاکت کیس ،DSPکھاریاں میاں محمد ارشد کومعطل کردیاگیا
  • ☚ علی بٹ اور فیصل بٹ کی سید مصطفی گیلانی کو ایس پی انویسٹی گیشن تعینات ہونے پر مبارکباد
  • ☚ جھیورنوالی سے 87پتنگیں برآمد ،کنجاہ پولیس کامیاب آپریشن
  • ☚ پنجاب پولیس نے اپنا ویب ٹی وی چینل بنانیکافیصلہ کرلیا،میگزین بھی شائع ہوگا
  • ☚ فاران انسٹی ٹیوٹ کی قابل قدرکاوشیں ہیں،طارق جاوید چوہدری کوخراج تحسین پیش کرتے ہیں:ڈاکٹراعجاز
  • ☚ ایس پی انویسٹی گیشن کے آتے ہی ایس پی ہیڈکوارٹر کاتبادلہ ،چارج چھوڑدیا
  • ☚ پی ٹی آئی کے پاس ہے کیا جو این آر او لیں، خواجہ آصف
  • ☚ قطرکی پاکستان کو ادھارLNGدینے سے معذرت، معاشی دباؤبڑھنے کاامکان
  • ☚ نیب نےن لیگ کے رہنما کامران مائیکل کو گرفتار کرلیا
  • ☚ ’’وزیر ِجھوٹ و خرافات نے جھوٹوں سے بھرپور پریس کانفرنس کی ‘‘
  • ☚ ’’وزیر ِجھوٹ و خرافات نے جھوٹوں سے بھرپور پریس کانفرنس کی ‘‘
  • ☚ عمران خان نے سہانے خواب دکھا کر عوام کو دھوکا دیا، احسن اقبال
  • ☚ ’’مڈٹرم الیکشن کی باتیں قیاس آرائیاں ہیں‘‘
  • ☚ سوات اور گردونواح میں زلزلے کے جھٹکے
  • ☚ اسلام آباد سمیت ملک کے مختلف شہروں میں زلزلے کے جھٹکے
  • ☚ 8 کروڑ افراد کیلئے مفت علاج، اسکیم کا آغاز، صحت کارڈ کے تحت غریب خاندان 7 لاکھ 20 ہزار روپے تک کا علاج حکومتی خرچے پر کراسکے گا، وزیراعظم
  • ☚ کشمیر میںانسانی حقوق کی خلاف ورزیاں روکنے کیلئے یورپی و برطانوی ارکان پارلیمنٹ کو کردار ادا کرنا ہوگا، امجد بشیر ایم ای پی
  • ☚ زلفی بخاری کا ’’اوورسیز پاکستانی سوشل کونسل ‘‘ کے قیام کا اعلان
  • ☚ بریگزٹ، تھریسامے ایم پیز سے ڈیل میں تبدیلی کیلئے مزید وقت مانگیں گی
  • ☚ حکومت نو ڈیل بریگزٹ کی صورت میں سڑکوں پر فسادات کی تیاری کررہی ہے، لارڈ باب
  • ☚ لیورپول سٹی سینٹر کے قریب فائرنگ سے 30سالہ شخص ہلاک
  • ☚ عوامی مینڈیٹ کی تکمیل حکومت کی ذمہ داری، یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی کا عمل بروقت مکمل کرلوں گی، تھریسامے
  • ☚ عوامی مینڈیٹ کی تکمیل حکومت کی ذمہ داری، یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی کا عمل بروقت مکمل کرلوں گی، تھریسامے
  • ☚ جرمن فوج میں مسلم آئمہ کی تقرری کیلئے مشاورت
  • ☚ حکومت پاکستان نے الطاف حسین کیخلاف مقدمات کی پیروی کے واجبات ادا کر دیئے
  • ☚ یورپی رہنمائوں کو بیک سٹاپ میں تبدیلی پر قائل کرلوں گی، تھریسامے، وزیراعظم برسلز پہنچ گئیں
  • ☚ کرن جوہرکی چہیتی کہنے پرکنگنا کوعالیہ کا کرارجواب
  • ☚ فلم کے سیٹ پررنبیر کو دیکھ کر عالیہ ڈائیلاگ کیوں بھول جاتی ہیں؟ اداکارہ کا اہم انکشاف
  • ☚ رنویر سنگھ نے راکھی ساونت کو دوسری ماں قرار دے دیا
  • ☚ ماضی میں سلمان خان کے سہارا دینے پرشاہ رخ خان آج بھی آبدیدہ
  • ☚ ماہرہ خان نے ایک اور بین الاقوامی اعزاز اپنے نام کرلیا
  • ☚ چیئرمین احسان مانی اور ایم ڈی وسیم خان آج دبئی روانہ ہونگے
  • ☚ پاکستان ویمن کرکٹ ٹیم نے تاریخ رقم کردی
  • ☚ آئی سی سی T20 رینکنگ، پاکستان کی پہلی پوزیشن برقرار
  • ☚ دبئی میں دوسرا ون ڈے پاکستان ویمن ٹیم نے جیت لیا
  • ☚ ثانیہ مرزا کی ٹینس کورٹ میں واپسی کی تیاری شروع
  • آج کا اخبار

    اپنی ذمہ داریوں کو محسوس کر کے جیو

    Published: 01-03-2018

    Cinque Terre

    ابن فہیم ؒ سے منسوب ہے کہ وہ فرماتے ہیں کہ جس حیوان سے آدمی کو پیار ہو اس حیوان کی عادتیں غیر شعوری طور پر اس میں آجاتی ہیں اور جب اس کا گوشت کھاتے لگے تو حیوان کے ساتھ مشابہت میں اور اضافہ ہو جاتا ہے۔ عرب اونٹ کھانے کے شوقین ہوتے ہیں اس لئے ان کی طبیعت میں نحوت، میرث اور اکڑ پن کا عنصر زیادہ پایا جاتا ہے اس طرح انگریز سور کا گوشت پسند کرتے ہیں اس لئے ان میں فحاشی کا عنصر زیادہ پایا جاتا ہے ہمارے ہاں جب سے فارمی مرغی کھانے کا رواج آیا ہے تب سے ہم بحیثیت قوم چوں چوں شور شرابا تو بہت کرتے ہیں لیکن مقابلہ کرنے کی قوت ہم میں ختم ہو گئی ہمارے سامنے ایک سے ایک غلط کام ہوتا ہے ہم ٹس سے مس نہیں ہوتے ہمارے سیاستدان ہیں جی بھر کے لوٹتے ہیں ہمارے سامنے وہ اربوں ، کھربوں میں کھیلنے لگتے ہیں ان کی اولادیں غریبوں کو بھیڑ بکریاں سمجھتی ہیں وہ ہمارے خدا بن بیٹھتے ہیں ہم پھر بھیان کے آگے دم بھرتے رہتے ہیں ایک گلی، ایک سڑک یا بریانی کی ایک پلیٹ پر اپنی ووٹ کیط اقت کو نہ سمجھتے ہوئے دوبارہ اسی کرپٹ اشرافیہ کو ووٹ ڈال آتے ہیں اور پھر روتے بھی ہیں کہ ہمارے ملک کاب یڑہ غرق ہو گیا ہے جعلی پیر، عامل روز نئے جال کے ساتھ آتے ہیں ہم جانتے ہوئے ان کے چنگل میں پھنس جاتے ہیں میرا ایک دوست ایک بابے سے لاٹری کے نمبر پوچھتا تھا پاگل کو میں نے اتنا سمجھایا کہ اگر بابا نمبر جانتا ہوتا تو وہ اپنے لئے نکال لیتا پر اس کی سمجھ میں نہیں آیا۔ عامل لوگ ایک ایک شعبدہ بازی سے لاکھوں کماتے ہیں ان کے دعوے ایسے ہوتے ہیں کہ بندہ عقل سے سوچے تو کبھی یقین نہ کرے مگر لوگ ہزاروں لٹا دیتے ہیں ہمیں پتہ چل جائے کہ فلاں دکان دار فراڈیا ہے دھوکہ باز ہے ۔ ملاوٹ کرتا ہے ہم نے سو دوسو کی چیز خریدنی ہوتی ہے مگر ہم اس دکان دار کے پاس دوبارہ نہیں جاتے مگر سیاستان، جھوٹے عامل، جھوٹے پیر ہمیں پتہ ہونے کے باوجود لوٹتے رہتے ہیں مگر ہم فارمی مرغی کی طرح خود ذبح ہونے کے لئے تیار رہتے ہیں روز ہم نوجوان بیٹیوں کے جنازے اٹھا رہے ہیں ایک دو دن روکر تھوڑا سا شور ڈال کر چپ کر جاتے ہیں معاشرہ تو ویسے ہی سرنڈر کر گیا ہے کہ میرے تو اپنے ہی سیاپے ختم نہیں ہو رہے۔ میں پرائی آگ میں کیوں چھلانگ لگاؤں ہم پر تو فارمی مرغی کا اتنا اثر ہو گیا ہے کہ روز ٹریفک حادثات ون ویلنگ کی وجہ سے ہمارے پیارے ہم سے جدا ہو رہے ہیں پر ہم نہ تو اس کا کوئی حل تلاش کررہے ہیں اور تو اور ہم اپنی اولاد کو بھی نہیں روک رہے جو ہماری آنکھوں کے سامنے موٹر سائیکل گھر لے کر آتا ہے جو ون ویلنگ یا ریس کے لئے تیار کی گئی ہوتی ہے کیا ہمیں نظر نہیں آرہا ہوتا یا ہم فارمی مرغی کی طرح اتنی سستی اتنی کاہلی،ا تنی بزدلی آگئی ہوئی ہے کہ ہم اپنے بچوں کو بھی کنٹرول نہیں کر پا رہے۔ خدا کے لئے بحیثیت معاشرہ کے فرد کے بحیثیت گھر کے سربراہ کے اپنی ذمہ داریاں پوری کریں۔ پوری قوت سے پورے وسائل کے ساتھ جہالت کے خلاف آواز اٹھائیں یہ گیم نہیں خود کشی ہے۔ میری نوجوان نسل سے بھی گزارش ہے کہ دنیامیں سب سے بھاری چیز ایک بوڑھے باپ کے لئے نوجوان بیٹے کا جنازہ ہوتا ہے باپ کو یہ بوجھ نہ اٹھوائیں۔ ماؤں، بہنوں کو آپ سے بڑی امیدیں ہیں ان کی امیدوں کو نہ توڑیں رب کریم سے دعا ہے کہ وہ سب کی حفاظت فرمائے۔ ہمارے حق میں خیر والے فیصلے فرمائے۔ لوگوں کے لئے امید بنیں خوش رکھیں۔ خوش رہیں۔