• ☚ شہباز پور پل پرروکنے کی سزا‘گاڑی سوارو ں نے سیکیورٹی گارڈ کچل ڈالا
  • ☚ چوہدری محمد ارشد چیچیاں کی اہلیہ کے ایصال ثواب کیلئے ختم قل
  • ☚ حاجی محمد بشیر کو حج بیت اللہ کی سعادت پر اہم شخصیات کی مبارکباد
  • ☚ بشیر احمد کو حج کی سعادت پر اہم شخصیات کی مبارکبادیں
  • ☚ گجرات:رجسٹریشن نہ کرانے پر مالک مکان کرایہ دار سمیت گرفتار
  • ☚ موجوکی میں سسرالیوں کا بہو پر بدترین تشدد‘ ہڈی پسلی ایک کردی
  • ☚ پاکستانی قومی بھار تی جارحیت کا منہ توڑ جواب دیگی:مہر فاروق
  • ☚ لالہ موسی میں گرانفروشی کا بازار گرم‘پرائس کنٹرول کمیٹیاں غیر فعال
  • ☚ مجلس قادریہ حضرت دیوان حضوری الکویت کے زیر اہتمام روحانی محفل
  • ☚ امام حسین کی شہا دت دنیا کے لیے مشعل راہ ہے:چوہدری عظمت
  • ☚ متحدہ اپوزیشن ، ن لیگ کا پی پی قیادت سے رابطہ ،ذرائع
  • ☚ فرانسیسی جنگی طیاروں کے سودے میں اربوں کی کرپشن، مودی حکومت خطرے میں
  • ☚ نواز شریف لاہور کے بعد جاتی امرا پہنچ گئے
  • ☚ سوئی گیس مہنگی، LPG سستی، قیمت میں 10 سے 143 فیصد اضافہ، LPG کے تمام ٹیکس ختم، صرف 10 فیصد GST لگے گا، بلوچستان،سندھ کیلئے CNG بھی مہنگی
  • ☚ ایشیا کپ: پاکستان فیورٹ ہے بھارت نہیں، سنجے منجریکر
  • ☚ وزیراعظم ہائوس کی 8 بھینسوں کی تفصیل سامنے آگئی
  • ☚ شریف خاندان کے پیرول میں توسیع کا نوٹیفیکیشن جاری
  • ☚ ’شریف خاندان کو مفروضے پر دی گئی سزا برقرار نہیں رہ سکتی‘
  • ☚ جمہوریت مضبوط،مزیدمستحکم ہوگی،نئے صدر کی حلف برداری جمہوری عمل کے تسلسل کیلئے اہم ہے، آرمی چیف
  • ☚ جمہوریت مضبوط،مزیدمستحکم ہوگی،نئے صدر کی حلف برداری جمہوری عمل کے تسلسل کیلئے اہم ہے، آرمی چیف
  • ☚ برطانوی نیو کلیئر ڈیٹرنٹ انفراسٹرکچر مقصد کیلئے فٹ نہیں، ایم پیز
  • ☚ برطانیہ کا بریگزٹ پلان مسترد،تھریسامے کو ہزیمت کاسامنا
  • ☚ برطانوی سیاست میں ساجدجاویدکے عروج پر برٹش ایشیائی باشندوں کاجشن
  • ☚ برطانیہ پاکستان کی سیاسی حساسیت سے واقف
  • ☚ بریگزٹ کے بعد انتقام کا خدشہ، ای یو مائیگرنٹس کو برطانوی ویزے دینے پر غور
  • ☚ سکھوں کا علیحدہ مملکت کیلئے خالصتان ایڈمنسٹریشن کا تاریخی اعلان
  • ☚ لندن: منی لانڈرنگ کے الزام میں پاکستانی سیاسی شخصیت اہلیہ سمیت گرفتار
  • ☚ بریگزٹ: یورپی یونین تھریسامے کو اپنی تجاویز پر قائل کرنے میں ناکام
  • ☚ ایم پیز کو میرے پلان یا پھر کوئی ڈیل نہیں کا انتخاب کرنا ہوگا، تھریسا مے
  • ☚ برطانیہ: منی لانڈرنگ کے الزام میں گرفتار پاکستانی کا نام سامنےآگیا
  • ☚ ایسی فلم میں کام نہیں کروں گا جسے دیکھ کر بیٹی شرمندہ ہوجائے، ابھیشیک بچن
  • ☚ دپیکا رنویر کی شادی تاخیر کا شکار
  • ☚ شلپا شیٹھی کو سڈنی ایئرپورٹ پر نسل پرستی کا سامنا
  • ☚ شعیب ملک کی تعریف کے دوران غلطی پر ماورا مذاق کا نشانہ بن گئیں
  • ☚ ایشیا کپ ،آج پاکستان روایتی حریف بھارت کو ہرانے کے لئے پرعزم
  • ☚ فخر زمان نے کس طرح خود اپنی وکٹ ضائع کی ؟
  • ☚ پاکستان کو 9 وکٹ سے شکست،بھارت فائنل میں
  • ☚ ایشیاکپ کے شیڈول میں توازن نہیں، پی سی بی
  • ☚ روتے ہوئےافغان بولر آفتاب کو شعیب ملک نےگلے لگا لیا
  • ☚ شعیب ملک نےسینئر ہونےکا حق ادا کردیا، سرفرازاحمد
  • آج کا اخبار

    تعلیمی اداروں اور صنعتوں کو ملکی معاشی ترقی کیلئے ملکر کام کرنا ہوگا‘ عرفان یوسف

    Published: 14-03-2018

    Cinque Terre

    گجرات(نمائندہ شانہ بشانہ) کاروبار اور انڈسٹری کی ترقی اور کاروبار کرنے کی آسانیاں پیدا کرنے کی رینکنگ کوبہتر بنانے کے لئے ون ونڈو سہولت سنٹر کا آغاز کیا جائے گا۔تعلیمی ادارے اور انڈسٹری کی مین پاور کی ضرورت کو ہم آہنگ کرنے کے لئے اقدامات کی ضرورت ہے۔ تعلیمی اداروں میں یونیورسٹی لیول تک نصاب کو اس طرح ٹرانسپلانٹ کیا جائے تاکہ یہاں کے گریجویٹس انڈسٹری کیلئے سود مند ثابت ہو ں۔ تعلیمی اداروں کی گورننگ باڈی میں پرائیویٹ سیکٹر کے پروفیشنل لوگوں کو شامل کیا جائے تا کہ عملی فوائد حاصل ہوں۔ تعلیمی اداروں ا ور صنعتوں کو ملکی معاشی ترقی کے لئے مل کر کام کرنا ہوگا۔تعلیمی اداروں اور صنعتوں کا باہمی تعاون وقت کی اہم ضرورت ہے۔ ان خیالات کا اظہار فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری (ایف پی سی سی آئی) کے نائب صدر و ریجنل چےئرمین چوہدری عرفان یوسف نے ایف پی سی سی آئی ریجنل آفس لاہور کی طرف سے ’’انڈسٹری اکیڈمیہ ‘‘ کے عنوان سے منعقدہ سیمینار کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر سارک چیمبر کے نائب صدر افتخار علی ملک نے کہاکہ پاکستان قدرتی وسائل سے مالا مال ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ ان کو بروئے کار لاتے ہوئے ملک کو معاشی طور پر مستحکم کیا جائے۔ ایف پی سی سی آئی تمام یونیورسٹیوں کے طلباء کی ہر ممکن مدد کرے گا اور انہیں انڈسٹری میں انٹرنشپ اور ٹریننگ کے بھرپور مواقع فراہم کرے گا۔ انہوں نے کہا ملک کی صنعتیں ہی قوم کو روزگار مہیا کرتی ہیں اور بد قسمتی سے ہم نے اس طرف بالکل بھی توجہ نہیں دی۔انہوں نے مزید کہا کہ ہمیں صنعت و تجارت اور کاروبار کو فروغ دینے کی اشد ضرورت ہے۔ انہوں نے ایف سی کالج کے علم اور ریسرچ میں جدت کے اقدام کو سراہا اور کہا کہ اس سے ملک و قوم کو یقینی فائدہ حاصل ہوگا۔سرکاری و غیرسرکاری تعلیمی اداروں اور ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کے ساتھ مل کر کام کیا جارہا ہے۔ چوہدری عرفان نے مزیدکہا کہ ایف پی سی سی آئی نے بہت سی پبلک اور پرائیویٹ یونیوسٹیوں کے ساتھ مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط کیے ہیں۔ ایف پی سی سی آئی تمام یونیورسٹیوں کے ساتھ تحقیقی سرگرمیوں کو فروغ دینے کے لیے مل کر کام کریں گا۔انڈسٹری اکیڈمک باہمی تعاون سے طلباء کو علم اور ریسرچ میں جدت ملے گی جو ہمارے ملک کی صنعتی ترقی میں اہم کردار ادا کر سکتی ہے۔انہوں نے مزید کہاکہ اکنامک کو دستاویزی کرنے کے لئے ایف بی آر میں ریفارمز لانے کی ضرورت ہے۔کاروباری برادری کو مشکلات کو کم کرنے کیلئے اور انڈسٹری کے فروغ کیلئے حکومت کی طرف سے ٹیکس ایمنسٹی سکیم دی جائے۔