• ☚ سری لنکا کیخلاف کیریئر کی یادگار اننگز کھیلی، رحمت شاہ
  • ☚ غیر قانونی گیس سلنڈر نصب کرانیوالے ٹرانسپوٹروں کیخلاف کاروائیاں
  • ☚ نواز شریف کی رہائی سے افواہوں کی پٹاری بند‘چہ مگوئیاں دم توڑ گئیں
  • ☚ تحریک انصاف کے رہنما راجہ نواز نے بیوہ خاتون کی عزت تار تار کردی
  • ☚ یوم عاشورہ کے تمام جلوسوں اور مجالس کی ویڈیو ریکاڈنگ کے احکامات
  • ☚ انجمن حیدریہ ہریہ والا کے زیر اہتمام مجالس کا سلسلہ جاری
  • ☚ چوہدری وجاہت حسین کو ضلعی چیئرمین منتخب کرائینگے : امیر حسین شاہ
  • ☚ گجرات ٹریولز ایجنٹس ایسوسی ایشن کا اجلاس‘اہم مطالبات پیش کر دیے
  • ☚ اجر رہنما جاوید بٹ کی راجہ نعیم کی والدہ کی وفات پر تعزیت
  • ☚ کھاریاں سے منشیات کی بڑی کھیپ پکڑی گئی ‘ سپلائر بھی گرفتار
  • ☚ نواز شریف لاہور کے بعد جاتی امرا پہنچ گئے
  • ☚ سوئی گیس مہنگی، LPG سستی، قیمت میں 10 سے 143 فیصد اضافہ، LPG کے تمام ٹیکس ختم، صرف 10 فیصد GST لگے گا، بلوچستان،سندھ کیلئے CNG بھی مہنگی
  • ☚ ایشیا کپ: پاکستان فیورٹ ہے بھارت نہیں، سنجے منجریکر
  • ☚ وزیراعظم ہائوس کی 8 بھینسوں کی تفصیل سامنے آگئی
  • ☚ شریف خاندان کے پیرول میں توسیع کا نوٹیفیکیشن جاری
  • ☚ ’شریف خاندان کو مفروضے پر دی گئی سزا برقرار نہیں رہ سکتی‘
  • ☚ جمہوریت مضبوط،مزیدمستحکم ہوگی،نئے صدر کی حلف برداری جمہوری عمل کے تسلسل کیلئے اہم ہے، آرمی چیف
  • ☚ جمہوریت مضبوط،مزیدمستحکم ہوگی،نئے صدر کی حلف برداری جمہوری عمل کے تسلسل کیلئے اہم ہے، آرمی چیف
  • ☚ شہباز شریف نےخود کو احتساب کے لئے پیش کردیا
  • ☚ بہت جلدنوازشریف کی رہائی کیلئے تحریک شروع کرینگے،مسلم لیگ ن
  • ☚ برطانیہ پاکستان کی سیاسی حساسیت سے واقف
  • ☚ بریگزٹ کے بعد انتقام کا خدشہ، ای یو مائیگرنٹس کو برطانوی ویزے دینے پر غور
  • ☚ سکھوں کا علیحدہ مملکت کیلئے خالصتان ایڈمنسٹریشن کا تاریخی اعلان
  • ☚ لندن: منی لانڈرنگ کے الزام میں پاکستانی سیاسی شخصیت اہلیہ سمیت گرفتار
  • ☚ بریگزٹ: یورپی یونین تھریسامے کو اپنی تجاویز پر قائل کرنے میں ناکام
  • ☚ ایم پیز کو میرے پلان یا پھر کوئی ڈیل نہیں کا انتخاب کرنا ہوگا، تھریسا مے
  • ☚ برطانیہ: منی لانڈرنگ کے الزام میں گرفتار پاکستانی کا نام سامنےآگیا
  • ☚ پاکستان کیلئے سرمایہ کاری کی کوشش کرتا رہا ہوں گا، صاحبزادہ جہانگیر
  • ☚ تھریسامے کا اپنی لیڈرشپ پر بحث سے پریشان ہونے کا اعتراف
  • ☚ بریگزٹ ،برطانیہ ای یو سے علیحدگی کا بل ادا کئے بغیر نہیں رہ سکتا
  • ☚ شاہد کپور بھی اقربا پروری کے خلاف میدان میں آگئے
  • ☚ ابھیشیک بچن کی فلم ’من مرضیاں‘ مشکلات کا شکار
  • ☚ ریمو ڈی سوزا نے فلم ’ریس تھری‘ کی ناکامی کی وجہ بتا دی
  • ☚ عالیہ کی والدہ بھی رنبیرکے ساتھ بیٹی کے رشتے پرخوش
  • ☚ پریانکا چوپڑا دمہ کے مرض میں مبتلا
  • ☚ کلب میں جھگڑنے والے بین اسٹوکس اور ہیلز پرفرد جرم عائد
  • ☚ پاکستانی فیلڈنگ میں بہتری، ہیڈ کوچ نے ٹیم کو ورلڈ کلاس بنادیا
  • ☚ پاکستان کی بھارت پر چار فاسٹ بولرز سے ہلہ بولنے کی تیاری
  • ☚ ایشیاکپ، پاک بھار ت ٹکراؤ کیلئے ٹیمیں تیار
  • ☚ بابر اعظم کے ون ڈے کیریئر میں دو ہزار رنز مکمل
  • آج کا اخبار

    فواد عالم کو ڈراپ کرنے کا فیصلہ فرد واحد انضمام الحق نے کیا

    Published: 19-04-2018

    Cinque Terre

    دورۂ برطانیہ کیلیے قومی اسکواڈ میں فواد عالم کی عدم شمولیت پر خاصی تنقید سامنے آئی، وسیم اکرم اور راشد لطیف سمیت کئی سابق اسٹارز، میڈیا اور شائقین نے اس فیصلے کو غلط قرار دیا ہے، چیف سلیکٹر کی قریبی شخصیات یہ تاثر دے رہی ہیں جیسے فواد کو ڈراپ کرنے میں مکی آرتھر کا ہاتھ ہے مگر ذرائع نے اس بات کو غلط قرار دیدیا۔ایک کھلاڑی نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ جب ٹیم کا اعلان ہوگیا تو اکیڈمی میں فواد عالم کا مکی آرتھر سے سامنا ہوا۔ اس موقع پر انھوں نے واضح طور پر کہا کہ 146146 میں نے اپنی پوری کوشش کی، ہارڈ لک145145۔ذرائع نے بتایا کہ آرتھر لگی لپٹی رکھنے کے عادی نہیں، انھیں سہیل خان اور وہاب کو ڈراپ کرنا تھا تو برملا خامیوں کا میڈیا میں آکر بتایا، اگر انھیں فواد سے بھی مسئلہ ہوتا تو صاف بات کرتے، البتہ انضمام الحق کسی وجہ سے فواد کو پسند نہیں کرتے اور کئی بار اپنے ساتھیوں کے سامنے کہہ چکے کہ میڈیا جتنی تنقید کرے مجھے کوئی پروا نہیں، البتہ انھیں یہ اندازہ نہیں تھا کہ فواد کیلیے اس قدر زیادہ آوازیں اٹھیں گی۔اسی لیے اب ماضی کی طرح ایک بار پھر انھیں مستقبل میں موقع دینے کی باتیں ہونے لگی ہیں، انضمام نے فواد کو ٹیم میں نہ لینے کے فیصلے سے مطلع بھی نہیں کیا تھا،انھوں نے اپنے بھتیجے امام الحق کومنتخب کرنے کیلیے صرف تین ٹیسٹ کیلیے اسکواڈ میں اوپنرز کی تعداد بھی تین کر لی، کپتان سرفراز احمد نے بھی فواد عالم سے ملاقات میں انھیں یہی بتایا کہ ان کی عدم شمولیت پر دکھ ہوا۔تین سال گذرنے کے بعد اب ڈومیسٹک کرکٹ نظام میں پھر تبدیلیاں متوقع ہیں،اس حوالے سے غور شروع کر دیا گیا مگر اب تک کوئی فیصلہ سامنے نہیں آیا ہے،اس وقت 8ڈپارٹمنٹس اور اتنے ہی ریجنز ایک ہی فرسٹ کلاس ٹورنامنٹ قائد اعظم ٹرافی میں حصہ لیتے ہیں، شریک 16 ٹیموں کو 2 گروپس میں تقسیم کیا جاتا ہے، اب یہ تجویز سامنے آئی ہیں کہ ٹیموں کی تعداد بڑھا کر24 کر دی جائے۔12ڈپارٹمنٹس اور اتنے ہی ریجنز الگ ٹورنامنٹس میں حصہ لیں،گریڈ ٹو کی سیمی فائنلسٹ ٹیموں کو بھی فرسٹ کلاس کرکٹ کھیلنے کا موقع دیا جائے،ریجنل ٹیموں کو چار، چار مہمان کھلاڑی شامل کرنے کی اجازت کی تجویز بھی زیرغور ہے، یہ بھی اطلاعات زیرگردش ہیں کہ رواں برس ڈرافٹنگ کے بجائے ریجنز ٹرائلز سے کھلاڑیوں کا انتخاب کریں گے۔پی ایس ایل کی طرز پر ڈومیسٹک کرکٹ میں ڈرافٹنگ سسٹم لانے پر بورڈ کو خاصی تنقید کا سامنا کرنا پڑا تھا، گوکہ حکام کا دعویٰ تھا کہ ایسا سفارشی کرکٹرز کو دور رکھنے کیلیے کیا گیا مگر اس کے باوجود سلیکشن میں گڑبڑ کی اطلاعات سامنے آئی تھیں۔پی سی بی کرکٹ کمیٹی ختم ہونے کے بعد اب ڈائریکٹر کرکٹ آپریشنز ہارون رشید ان تجاویز پر کام کر رہے ہیں مگر حیران کن طور پر اب تک کسی حتمی فیصلے پر نہیں پہنچ سکے، کوچز کی ایک کانفرنس بلانے کا ارادہ ہے جس میں مزید تبادلہ خیال ہوگا، اس کے بعد سفارشات منظوری کے لیے گورننگ بورڈ اور چیئرمین کو پیش کی جائیں گی۔