• ☚ ماضی میں حکومتیں معاشی حب کراچی کو نظرانداز کرتی رہیں، وزیراعظم
  • ☚ اپوزیشن کے تیار ہوتے ہی حکومت کے خلاف تحریک عدم اعتماد لے آئیں گے، بلاول
  • ☚ پی ڈی ایم کا پیپلز پارٹی اور اے این پی کے ساتھ مل کر بجٹ کی مخالفت کا فیصلہ
  • ☚ حکومت نے بجلی 1 روپے 72 پیسے فی یونٹ مہنگی کردی
  • ☚ 9 ماہ کے دوران بیرونی قرضوں میں 7 ارب41 کروڑ 30 لاکھ ڈالر سے زائد کا اضافہ
  • ☚ پاکستان نے پہلے ٹی ٹوئنٹی میں جنوبی افریقا کو شکست دیدی
  • ☚ حکومت نے ملک بھر میں جلسے جلوس پر پابندی عائد کردی
  • ☚ آئی ایم ایف کا بجلی، گیس اور یوٹیلیٹی اسٹورز پر سبسڈیز ختم کرنے کا مطالبہ
  • ☚ وزیراعظم نے گستاخانہ خاکوں کا معاملہ اقوام متحدہ میں اٹھادیا، اسلامو فوبیا کیخلاف یوم منانے کا مطالبہ
  • ☚ پیپلزپارٹی نے زیادتی کیس کے مجرم کو سرعام پھانسی دینے کی مخالفت کردی
  • ☚ ملک ریاض کی آصف زرداری کو عمران خان کا مفاہمت کا پیغام پہنچانے کی مبینہ آڈیو سامنے آگئی
  • ☚ سمندر پار پاکستانی ’امپورٹڈ حکومت‘ کے خلاف مظاہرے اور سوشل میڈیا پر مہم چلائیں، عمران خان
  • ☚ پشاور قصہ خوانی بازار کی مسجد میں نماز جمعہ کے دوران خودکش حملہ، 57 افراد شہید
  • ☚ حکومت کا ملک میں بھارت اور بنگلا دیش سے زیادہ مہنگائی کا اعتراف
  • ☚ وزیر خارجہ کا ڈی جی آئی ایس آئی کے ہمراہ کابل کا اہم دورہ
  • ☚ ’’پینڈورا پیپرز‘‘ سامنے آگئے، 700 پاکستانیوں کی آف شور کمپنیاں نکل آئیں
  • ☚ شمالی وزیرستان میں فورسز کی گاڑی پر حملہ، 5 اہل کار شہید
  • ☚ کورونا وبا؛ مزید 33 افراد جاں بحق، ایک ہزار سے زائد مثبت کیسز رپورٹ
  • ☚ افغانستان میں امن کیلیے عالمی برادری کی امداد ضروری ہے، آرمی چیف
  • ☚ طالبان نے افغانستان میں نئی حکومت کی تشکیل کا اعلان کردیا
  • ☚ اسلام پسندی سے مغرب کو اب بھی خطرہ موجود ہے، سابق برطانوی وزیراعظم
  • ☚ افغانستان کے نئے وزیراعظم ملا حسن اخوند کی زندگی پر ایک نظر
  • ☚ ایران پر حملے کے پلان پر تیزی سے کام جاری ہے، اسرائیلی آرمی چیف
  • ☚ کرونا لاک ڈاؤن، بے گھر افراد کی مدد کے لیے اٹلی کے شہریوں کی زبردست کاوش
  • ☚ ایران میں کورونا وائرس سے خاتون رکنِ اسمبلی ہلاک
  • ☚ کورونا وائرس کے متاثرین 1لاکھ 8 ہزار ہوگئے، اٹلی میں 24 گھنٹوں کے دوران 133ہلاکتیں
  • ☚ دبئی کے حکمراں اہلیہ کو دھمکیاں دینے اور بیٹیوں کے اغوا کے مرتکب ہوئے، برطانوی عدالت
  • ☚ ترکی اور روس کا شام میں جنگ بندی پر اتفاق
  • ☚ تیونس میں امریکی سفارت خانے پر خود کش حملہ
  • ☚ کورونا وائرس؛ سعودی شہریوں کے عمرہ ادائیگی پر بھی پابندی
  • ☚ عالیہ بھٹ کی شوٹنگ کے دوران طبیعت خراب، اسپتال منتقل
  • ☚ عالیہ بھٹ کی شوٹنگ کے دوران طبیعت خراب، اسپتال منتقل
  • ☚ حریم شاہ کی لیک ویڈیو نے مفتی قوی کا اصل چہرہ بے نقاب کردیا
  • ☚ "ارطغرل غازی" کے اداکار کا طیارہ حادثے پر اظہار افسوس
  • ☚ کورونا وائرس؛ فنکاروں کی حکومت سے غریب طبقے کا خیال رکھنے کی درخواست
  • ☚ سری لنکا ٹیم حملے میں زخمی ہونے والے احسن رضا کا بطور ٹیسٹ امپائر ڈیبیو
  • ☚ محمد عامر کی قومی ٹیم میں واپسی کیلیے مشروط رضامندی
  • ☚ پی ایس ایل کا چھٹا ایڈیشن تماشائیوں کی موجودگی میں ہونے کا امکان
  • ☚ پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی نے پب جی گیم پر پابندی ختم کردی
  • ☚ روزانہ 22 گھنٹے گیم کھیلنے سے نوجوان کا بازو اور ہاتھ مفلوج
  • آج کا اخبار

    برطانیہ کے عام انتخابات میں 70 سے زائد برٹش پاکستانی امیدوار

    Published: 28-11-2019

    Cinque Terre

    برطانوی عام انتخابات میں ریکارڈ تعداد میں پاکستان نژاد امیدوار پارلیمنٹ پہنچ سکتے ہیں، 12دسمبر کو ہونے والے انتخابات میں پہلی بار کنزرویٹیوز، لیبر اور لبرل ڈیمو کریٹس نے 70 سے زائد برٹش پاکستانیوں کو ٹکٹ دیئے ہیں اور بہت سے آزاد امیدوار کے طور پر حصہ لے رہے ہیں۔ زیادہ تر برٹش پاکستان کنزرویٹو کے ٹکٹ پر الیکشن لڑ رہےہیں، لیکن لیبر کے ٹکٹ پر لڑنے والوں کی کامیابی کے امکانات زیادہ روشن ہیں۔ کنزرویٹو نے 20برٹش پاکستانیوں کو امیدوار بنایا ہے۔ ٹوری امیدواروں میں چانسلر ساجد جاوید، نصرت غنی، رحمنٰ چشتی اور ثاقب بھٹی شامل ہیں۔ ساجد جاوید 2010 برومسگریو واروکشائر سے پارلیمنٹ کا حصہ ہیں۔ نصرت غنی نے منسٹر فار ٹرانسپورٹ کے طور پر خدمات انجام دیں، وہ 2015 میں سائوتھ ایسٹ کے علاقے ویلڈ سے منتخب ہوئی تھیں۔ وہ کنزرویٹیو کی جانب سے ہائوس آف کامنز میں نمائندگی کرنے والی پہلی پاکستانی اوریجن خاتون ہیں۔ رحمٰن چشتی وزیراعظم کے خصوصی نمائندہ برائے مذہبی آزادی ہیں، وہ 2010 میںپہلی بار گلنگہیم سے منتخب ہوئے تھے۔ اس لسٹ میں سب سے دل چسپ امیدوار ثاقب بھٹی ہیں انہیں کنزرویٹیو کی ایک محفوظ ترین سیٹ میریڈن واروکشائر سے ٹکٹ الاٹ کیا گیا۔ بھٹی پیشے کے اعتبار سے اکائونٹنٹ ہیں، وہ اس وقت گریٹر برمنگھم چیمبر آف کامرس کے صدر ہیں۔ کنزرویٹوز کی جانب سے الیکشن لڑنے والے دیگر امیدواروں میں افتخار احمد (برنسلے سینٹرل ) محمد افضل (بریڈ فورڈ ویسٹ) سابق ایم ای پی امجد بشیر (لیڈز نارتھ ایسٹ) کاشف علی (ہیلی فیکس)، عمران احمد خان (ویکفیلڈ) شامل ہیں۔ گریٹر لندن ریجن سے نوشابہ خلجی (لیٹن اینڈ وانسٹڈ) علی عظیم (الفرڈ ساؤتھ) سے لیبر حریفوں کا مقابلہ کریں گے۔ گریٹر مانچسٹر ریجن سے عفیفہ شاہ (راچڈیل)،عتیقہ چوہدری (سیالفورڈ اینڈ ایکلیس)، طیب امجد (اسٹیلی برج اینڈ ہائیڈ) اور مصدق مرزا (سٹریفورڈ اینڈ ارمسٹن) سے ٹوری امیدوار ہیں۔ کنزرویٹو کی فہرست میں واس (وسیم) مغل (سیفٹن سینٹرل لنکاشائر)، احمد اعجاز (وولور ہیمپٹن ساؤتھ ایسٹ)،پرویز اختر (لوٹن ساؤتھ) اور ہارون ملک (اینورکلائیڈ سکاٹ لینڈ) شامل ہیں۔ دوسری طرف لیبر پارٹی کے ٹکٹ پر 19 پاکستانی اوریجن الیکشن لڑ رہے ہیں۔ پچھلی پارلیمنٹ میں لیبر کے پاس سب سے زیادہ پاکستان نژاد 9 پارلیمنٹیرین تھے اور وہ تمام 9 اس بار بھی الیکشن لڑ رہے ہیں۔ ان میں خالد محمود بھی ہیں جو 2001 سے برمنگھم پیری بار سے جیت رہے ہیں اور وہ سب سے سینئر پاکستان نژاد مسلم پارلیمنٹیرین ہیں۔ برمنگھم لیڈی ووڈ سے شبانہ محمود (2010 میں پہلی بار منتخب ہوئی تھیں) یاسمین قریشی (2010 میں پہلی بار منتخب) بولٹن ساؤتھ ایسٹ سے، بریڈ فورڈ ویسٹ سے ناز شاہ (پہلی بار 2010 میں منتخب ) بریڈ فورڈ ایسٹ سے عمران حسین (پہلی بار 2010 میں منتخب)، ٹوٹنگ سے ڈاکٹر روزینہ آلین خان (جنہوں نے صادق خان کے میئر بننے کے بعد جگہ لی) مانچسٹر گورٹن سے تعلق رکھنے والے افضل خان۔ فیصل راشد (2017 میں پہلی بار منتخب) وارنگٹن ساؤتھ سے اور محمد یاسین (2017 میں پہلی بار منتخب) بیڈفورڈ سے امیدوار ہیں ۔ لیبر پارٹی کے نئے پارلیمانی امیدواروں طاہر علی (برمنگھم ہال گرین)، زارا سلطانہ (کوونٹری سائوتھ ) اظہر علی (پینڈل) خلیل احمد (ویکمب )، زاہد چوہان (چیڈل)، نبیلہ احمد (ہیمیل ہیمپسٹڈ)، فائزہ شاہین (چنگفورڈ اینڈ سائوتھ وڈفورڈ)، مرینہ احمد (بیکنکہیم)، احمد نواز وٹو (کارشلٹن اینڈ ویلنگٹن ) اور صفیہ احمد (فالرک سکاٹ لینڈ)، سلطانہ اور علی دونوں کو لیبر کی محفوظ نشستوں سے ٹکٹ دیا گیا ہے۔ تاہم علی کو مخالف راجر گاڈسیف کے سخت چیلنج کا سامنا ہے ، جو 1992 سے برمنگھم سے لیبر ممبر پارلیمنٹ رہ چکے ہیں لیکن اب وہ انڈی پینڈنٹ امیدوار کے طور پر الیکشن لڑ رہے ہیں کیونکہ ایل جی بی ٹی معاملے پر لیبر نے ان کے موقف کی حمایت کرنے سے انکار کر دیا تھا۔ لبرل ڈیموکریٹس نے دسمبر میں ہونے والے انتخابات میں 12 پاکستان اوریجن امیدوار میدان میں اتارے ہیں ۔ ان کا کبھی پاکستان نژاد رکن پارلیمنٹ منتخب نہیں ہوا۔ لبرل ڈیموکریٹس کے پارلیمانی امیدواروں حنا بخاری (سٹن اینڈ چیام) حمیرا علی (برمنڈسے اینڈ ساؤتھ وارک) ڈاکٹر طارق محمود (ایلنگ ساؤتھ آل)، حنا ملک (فیلتھم اینڈ ہسٹن)، خلیل یوسف (کرولی)، عائشہ میر (ملٹن کینز نارتھ)، صالحہ احسان (ملٹن کینز سائوتھ)، ظفر حق (ہاربورو)، وحید رفیق (برمنگھم -ہال گرین)، کامران حسین (لیڈز نارتھ ویسٹ) جاوید بشیر (کالڈر ویلی ) اور فیضان رحمٰن (سٹرلنگ) شامل ہیں۔ ظفرحق، حنا ملک اور عائشہ میر نے 2017 کے انتخابات میں حصہ لیا تھا۔ اینٹی یورپ بریگزٹ پارٹی نے پانچ پاکستانی اوریجن امیدواروں کو میدان میں اتارا ہے۔ ان میں ڈاکٹر طارق محمود (اسٹوک)، وقاص علی خان (کیتھلے )، واج علی (ہیمسورتھ)، ڈاکٹر احمد ملک (چیشم اینڈ امرشیم) اور دانیال راجہ (گلاسگو ساؤتھ) شامل ہیں۔ گرین پارٹی کے پلیٹ فارم سے چار پاکستان نژاد امیدوار انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں۔ ان میں شہاب ادریس (لیڈز ایسٹ)ڈاکٹر رضا حسن (بلیک برن)‘ ٹی اکرم (بیٹلی اینڈ سپن )‘ اور طالیہ حسین (آزلنگٹن ساؤتھ اینڈ فنسبری) شامل ہیں ۔ تقریبا 10 10 برٹش پاکستانی امیدوار پارلیمنٹ میں نشست حاصل کرنے کیلئے آزاد حیثیت میں الیکشن لڑ رہے ہیں جن کا تعلق مقامی چھوٹی جماعتوں سے ہے۔ آزاد امیدواوں میں اظفر شاہ بخاری (بریڈفورڈ ویسٹ) یاسین رحمنٰ( لوٹن نارتھ) ارم الطاف کیانی ( الٹرنچہیم اینڈ سیل ویسٹ) رضوان علی شاہ (بلیک برن) حسیب الرحمنٰ ( ہیکنی سائوتھ اینڈ سٹوک نیونگٹن) اور محمد علی بھٹی ( یو کے آئی پی) ‘کامران ملک ( ایسٹ ہیم) اور حمیرا ملک ( ویسٹ ہیم) دونوں کمیونیٹیز پارٹی امیدوارہیں۔ حسن ذوالکفل (ایلنگ سائوتھ ہال) کا تعلق ورکرز ریولوشنری پارٹی سے ہے جبکہ سکاٹ لینڈ کی سب سے بڑی پارٹی ایس این پی نے کسی پاکستانی اوریجن امیدوارکو ٹکٹ نہیں دیا۔ تاہم 2015 اور 2017 کے انتخابات میں پاکستان کی معروف ٹی وی اداکارہ تسمینہ احمد شیخ کو ٹکٹ دیا تھا وہ 2015 کے انتخابات میں اوچلی سے کامیاب ہوئی تھیں اور 2017 کا الیکشن سائوتھ پرتھشائر سے ہار گئی تھیں ۔ امیدواروں کی فہرست شائع ہونے کے بعد لیڈز نارتھ ایسٹ سے کنزرویٹیو نے امیدوار امجد بشیر اور لبرل ڈیموکریٹس نے برمنگھم ہوج ہل سے امیدوار وحید رفیق کو اینٹی سیمیٹزم الزامات کے بعد ڈس اون کر دیا ہے۔