• ☚ ماضی میں حکومتیں معاشی حب کراچی کو نظرانداز کرتی رہیں، وزیراعظم
  • ☚ اپوزیشن کے تیار ہوتے ہی حکومت کے خلاف تحریک عدم اعتماد لے آئیں گے، بلاول
  • ☚ پی ڈی ایم کا پیپلز پارٹی اور اے این پی کے ساتھ مل کر بجٹ کی مخالفت کا فیصلہ
  • ☚ حکومت نے بجلی 1 روپے 72 پیسے فی یونٹ مہنگی کردی
  • ☚ 9 ماہ کے دوران بیرونی قرضوں میں 7 ارب41 کروڑ 30 لاکھ ڈالر سے زائد کا اضافہ
  • ☚ پاکستان نے پہلے ٹی ٹوئنٹی میں جنوبی افریقا کو شکست دیدی
  • ☚ حکومت نے ملک بھر میں جلسے جلوس پر پابندی عائد کردی
  • ☚ آئی ایم ایف کا بجلی، گیس اور یوٹیلیٹی اسٹورز پر سبسڈیز ختم کرنے کا مطالبہ
  • ☚ وزیراعظم نے گستاخانہ خاکوں کا معاملہ اقوام متحدہ میں اٹھادیا، اسلامو فوبیا کیخلاف یوم منانے کا مطالبہ
  • ☚ پیپلزپارٹی نے زیادتی کیس کے مجرم کو سرعام پھانسی دینے کی مخالفت کردی
  • ☚ سمندر پار پاکستانی ’امپورٹڈ حکومت‘ کے خلاف مظاہرے اور سوشل میڈیا پر مہم چلائیں، عمران خان
  • ☚ پشاور قصہ خوانی بازار کی مسجد میں نماز جمعہ کے دوران خودکش حملہ، 57 افراد شہید
  • ☚ حکومت کا ملک میں بھارت اور بنگلا دیش سے زیادہ مہنگائی کا اعتراف
  • ☚ وزیر خارجہ کا ڈی جی آئی ایس آئی کے ہمراہ کابل کا اہم دورہ
  • ☚ ’’پینڈورا پیپرز‘‘ سامنے آگئے، 700 پاکستانیوں کی آف شور کمپنیاں نکل آئیں
  • ☚ شمالی وزیرستان میں فورسز کی گاڑی پر حملہ، 5 اہل کار شہید
  • ☚ کورونا وبا؛ مزید 33 افراد جاں بحق، ایک ہزار سے زائد مثبت کیسز رپورٹ
  • ☚ افغانستان میں امن کیلیے عالمی برادری کی امداد ضروری ہے، آرمی چیف
  • ☚ طالبان نے افغانستان میں نئی حکومت کی تشکیل کا اعلان کردیا
  • ☚ سید علی گیلانی سری نگر میں سپرد خاک، بھارت نے وادی میں غیر اعلانیہ کرفیو لگادیا
  • ☚ اسلام پسندی سے مغرب کو اب بھی خطرہ موجود ہے، سابق برطانوی وزیراعظم
  • ☚ افغانستان کے نئے وزیراعظم ملا حسن اخوند کی زندگی پر ایک نظر
  • ☚ ایران پر حملے کے پلان پر تیزی سے کام جاری ہے، اسرائیلی آرمی چیف
  • ☚ کرونا لاک ڈاؤن، بے گھر افراد کی مدد کے لیے اٹلی کے شہریوں کی زبردست کاوش
  • ☚ ایران میں کورونا وائرس سے خاتون رکنِ اسمبلی ہلاک
  • ☚ کورونا وائرس کے متاثرین 1لاکھ 8 ہزار ہوگئے، اٹلی میں 24 گھنٹوں کے دوران 133ہلاکتیں
  • ☚ دبئی کے حکمراں اہلیہ کو دھمکیاں دینے اور بیٹیوں کے اغوا کے مرتکب ہوئے، برطانوی عدالت
  • ☚ ترکی اور روس کا شام میں جنگ بندی پر اتفاق
  • ☚ تیونس میں امریکی سفارت خانے پر خود کش حملہ
  • ☚ کورونا وائرس؛ سعودی شہریوں کے عمرہ ادائیگی پر بھی پابندی
  • ☚ عالیہ بھٹ کی شوٹنگ کے دوران طبیعت خراب، اسپتال منتقل
  • ☚ عالیہ بھٹ کی شوٹنگ کے دوران طبیعت خراب، اسپتال منتقل
  • ☚ حریم شاہ کی لیک ویڈیو نے مفتی قوی کا اصل چہرہ بے نقاب کردیا
  • ☚ "ارطغرل غازی" کے اداکار کا طیارہ حادثے پر اظہار افسوس
  • ☚ کورونا وائرس؛ فنکاروں کی حکومت سے غریب طبقے کا خیال رکھنے کی درخواست
  • ☚ سری لنکا ٹیم حملے میں زخمی ہونے والے احسن رضا کا بطور ٹیسٹ امپائر ڈیبیو
  • ☚ محمد عامر کی قومی ٹیم میں واپسی کیلیے مشروط رضامندی
  • ☚ پی ایس ایل کا چھٹا ایڈیشن تماشائیوں کی موجودگی میں ہونے کا امکان
  • ☚ پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی نے پب جی گیم پر پابندی ختم کردی
  • ☚ روزانہ 22 گھنٹے گیم کھیلنے سے نوجوان کا بازو اور ہاتھ مفلوج
  • آج کا اخبار

    سمندر پار پاکستانی ’امپورٹڈ حکومت‘ کے خلاف مظاہرے اور سوشل میڈیا پر مہم چلائیں، عمران خان

    Published: 08-05-2022

    Cinque Terre

     اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین اور سابق وزیر اعظم عمران خان نے سمندر پار مقیم پاکستانیوں سے حکومت مخالف مہم میں تعاون مانگتے ہوئے انہیں سوشل میڈیا پر مہم، مظاہروں اور عوامی نمائندوں کو خط لکھنے کی ہدایت کردی۔

    اوور سیز پاکستانیوں سے آن لائن خطاب میں عمران خان نے اوور سیز میں مقیم پی ٹی آئی کے حامیوں اور تمام پاکستانیوں کو ہدایت کی کہ وہ اپنے ممالک کے عوامی نمائندوں کو خط لکھ کر مداخلت کے حوالے سے سوال کریں اور ہماری جدوجہد کو کامیاب بنانے کے لیے چندہ بھی بھیجیں۔

    انہوں نے کہا کہ پاکستان میں حکومت کے خلاف ہونے والی سازش کے خلاف عوامی احتجاج قابل تعریف ہے، پہلی بار پاکستانیوں کا یہ جذبہ دیکھا جو کسی بھی صورت غلامی کے لیے تیار نہیں بلکہ آزاد پاکستان کے خواہش مند ہیں۔

    سابق وزیر اعظم اور پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ وہ کبھی امریکا یا یورپ کے مخالف نہیں رہے ہیں اور ہمیشہ دوستی کے خواہاں ہیں لیکن امریکا پاکستان سے روس سے تیل کی کم قیمت طے کرنے کے معاملے پر ناراض ہوا کیونکہ امریکا کو پاکستان میں آزاد حکومت کی عادت نہیں ہے۔

    انہوں نے ایک مرتبہ پھر کہا کہ ’حکومت ہٹا کر نااہل لوگوں کو لایا گیا اور حکومت گرانے کے لیے سندھ ہاؤس میں ’لوٹوں کی منڈی‘ لگائی گئی، ماضی میں مشرف امریکی دھمکی برداشت نہ کرسکا اورافغان جنگ میں کود گیا، نائن الیون سے پاکستان کا کوئی لینادینا نہیں تھا مگر پاکستان کو بڑے پیمانے پر جانی و مالی نقصان کا سامنا کرنا پڑا، جس میں ہماری 80 ہزار لوگ جانوں سے گئے۔

    پی ٹی آئی چیئرمین نے اس خواہش کا اظہار کیا کہ ادارے آج یہ جان لیں کہ قوم ‘امریکی سازش’ کے بیانیے پر کہاں کھڑی ہے اور اُس کی خواہش کیا ہے۔

    عمران خان نے سیاسی مخالفین کو مخاطب کرکے کہا کہ امریکا میں پاکستانی سفیر کو ڈونلڈلو نے بلا کردھمکی دی تھی، حکومت میں آنے والے لوگ دنیا میں کہیں بھی چلے جائیں غدار اور چور کے نعرے لگیں گے، یہ کرپٹ لوگ ہیں وزیراعظم بننے والے شخص کے خاندان پر40 ارب روپے کی کرپشن کے کیسز ہیں۔

    انہوں نے کہا کہ بیرون ملک ہاتھ پھیلا کر پیسے مانگنے سے شرم آتی تھی لیکن میں نے پاکستان کے لیے پیسے مانگے، بدقسمتی سے ہماری حکمران اشرافیہ کرپٹ، نرم مزاج اور غلام ہے اور وہ سمجھتی ہے کہ ہم امریکا کے بغیر زندہ نہیں رہ سکتے۔

    علاوہ ازیں ان کا کہنا تھا کہ ہمارے روس کے ساتھ ہی گیس سے متعلق گفت وشنید پہلے سے چل رہی تھی اور روس کی جانب سے تیل کی قیمت کم طے کرنے کے معاملے پر امریکا ناراض ہو گیا اور پھر سازش تیار ہوئی جس کے بعد ہمارے خلاف میر جعفر اور میر صادق ان سے مل گئے۔

    عمران خان نے کہا کہ بھارت نے امریکا کے ساتھ قریبی تعلقات کے باوجود روس سے بات چیت کی اور سستی قیمت پر تیل حاصل کیا لیکن ہمارے روس کے دورے نے مغرب کو ناراض کیا، واشنگٹن نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کے دوران ہماری (پاکستان) کی مدد کی کوششوں کو کبھی نہیں سراہا اور اب وہ ہمیں دھمکیاں دے رہے ہیں۔

    سابق وزیر اعظم نے بیرون ملک میں مقیم اپنے کارکنوں سے چندہ مہم کے لیے تعاون کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ امپورٹڈ حکومت اور ہمارے ساتھ ہونے والی زیادتی کے خلاف سوشل میڈیا پر مہم چلائیں اور اپنے ممالک کے عوامی نمائندوں کو خط لکھ کر اُن سے سوال کریں کہ منتخب حکومت کے خلاف ایسا کیوں کیا گیا۔

    پی ٹی آئی چیئرمین نے مزید کہا کہ میں 20 مئی کے بعد کسی بھی دن اسلام آباد کی کال دے دوں گا، جس میں عوام بڑی تعداد میں شریک ہوکر اسلام آباد پہنچیں گے۔